The news is by your side.

Advertisement

جنرل سلیمانی سے متعلق غلط معلومات دینے پر ایک شخص گرفتار

یریوان: امریکی حملے میں قتل ہونے والے ایرانی جنرل قاسم سلیمانی سے متعلق غلط معلومات دینے پر ارمینیا میں ایک شخص کو گرفتار کرلیا گیا۔

غیرملکی خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق سماجی رابطے کی ویب سائٹ فیس بک پر ارمینیا کے شہری کو ایرانی جنرل قاسم سلیمانی سے متعلق غلط معلومات دینے پر حراست میں لے لیا گیا۔

ارمینیائی شہری ڈیانا آرٹیونیان نے فیس بک پر دعویٰ کیا تھا کہ وزیراعظم نے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو ایرانی جنرل قاسم سلیمانی کی ہلاکت پر مبارک باد پیش کی ہے۔

ارمینیا کی سیکیورٹی سروس کا کہنا ہے کہ 2 جنوری کو فیس بک پیج پر ڈیانا آرٹیونیان نے غلط معلومات شیئر کرتے ہوئے کہا کہ وزیراعظم نیکول پشینیان نے ایرانی جنرل قاسم سلیمانی کی ہلاکت پر امریکی صدر کو مبارک باد پیش کی ہے۔

مزید پڑھیں: جنرل قاسم سلیمانی کے قتل کا بدلہ عسکری طریقے سے لیں گے، آیت اللہ خامنہ ای

ارمینیا سیکیورٹی سروس کا کہنا ہے کہ اس غلط معلومات کو آذربائیجان اور ایرانی میڈیا نے اٹھایا، جس سے ارمینیا کے قومی سلامتی کے مفادات کو بڑا نقصان پہنچا۔

رپورٹ کے مطابق ارمینیا کے وزیراعظم پشیانین خود اتوار کے روز اپنے فیس بک پیج پر اس کی تردید کی تھی کہ انہوں نے ٹرمپ کو مبارک باد پیش کی ہے۔

واضح رہے 3 جنوری کو بغداد میں امریکی فضائی حملے میں ایرانی جنرل قاسم سلیمانی سمیت 9 افرادجاں بحق ہوگئے تھے ، ان کے قافلے کو میزائل سے نشانہ بنایا، پینٹاگون کا کہنا تھا کارروائی صدرٹرمپ کے حکم پرکی گئی۔

ایرانی صدرحسن روحانی کا کہنا تھا کہ ایران اور خطے کے آزادی پسند ممالک جنرل سلیمانی کی موت کا بدلہ لیں گے، جنرل سلیمانی کی شہادت نے ایرانی عزم کو مزید مضبوط کیا ہے۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں