The news is by your side.

Advertisement

یو اے ای: خاتون کو ٹیکسٹ میسجز کرنے پر ساڑھے تین لاکھ جرمانہ

العین: متحدہ عرب امارات میں خاتون کو ٹیکسٹ میسجز کر کے ان کے جذبات مجروح کرنے پر ایک شخص کو ساڑھے تین لاکھ روپے جرمانہ کر دیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق یو اے ای میں ایک نوجوان کو موبائل فون پر میسجز بھیج کر خاتون کے جذبات کو ٹھیس پہنچانے کے لیے 20 ہزار درہم ادا کرنے کا حکم دے دیا گیا۔

نوجوان خاتون نے شہری کے خلاف مقدمہ کیا تھا، جس میں انھوں نے مطالبہ کیا کہ انھیں ٹیکسٹ پیغامات بھیجنے پر شہری ایک لاکھ درہم زر تلافی ادا کرے، خاتون کا کہنا تھا کہ ٹیکسٹ پیغامات میں اس شخص نے ان پر کئی مردوں کے ساتھ تعلقات کا الزام لگایا، اور یہ بھی کہا کہ میں نے اسے اپنی تصاویر بھیج کر اسے بہکایا۔

خاتون نے عدالت سے استدعا کی کہ مذکورہ شخص نے اپنے موبائل فون سے بھیجے گئے ایک پیغام میں مردوں سے تعلقات کا الزام لگا کر ان کی توہین کی، اس لیے انھیں جذباتی طور پر پہنچنے والے نقصان کی زر تلافی ادا کی جائے۔

دوسری طرف نوجوان نے عدالت سے یہ مقدمہ مسترد کرنے کی درخواست کی، اور یہ دعویٰ کیا کہ اس خاتون نے 39 ہزار درہم کی رقم پر گفت و شنید کی ہے، انھوں نے مزید کہا کہ اسی بارے میں ایک فیصلہ بھی جاری ہو چکا ہے۔

خلیج ٹائمز کی رپورٹ کے مطابق العین کورٹ نے مذکورہ شخص کو خاتون کی توہین کرنے کا مجرم قرار دیا، عدالت نے کہا کہ واقعہ اخلاقی نقصان، خاتون کے جذبات مجروح کرنے اور اس کی ساکھ کو نقصان پہنچانے کا ہے، عدالت حکم دیتی ہے کہ مذکورہ شخص خاتون کو قانونی فیس اور چارجز کے علاوہ بیس ہزار درہم بھی ادا کرے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں