The news is by your side.

Advertisement

نیٹ فلکس کے پاس ورڈ پر تکرار، بات خون خرابے تک پہنچ گئی

کرونا وائرس اور لاک ڈاؤن کے دوران امریکی ویڈیو اسٹریمنگ پلیٹ فارم نیٹ فلکس استعمال کرنے والوں کی تعداد میں بے تحاشہ اضافہ ہوچکا ہے، اکثر اوقات نیٹ فلکس کا ایک اکاؤنٹ متعدد افراد کے زیر استعمال رہتا ہے۔

امریکا میں ایسے ہی ایک معاملے پر بات خون خرابے تک پہنچ گئی جب بھانجے نے اپنے انکل کو چاقو کے وار کر کے زخمی کردیا۔

امریکی شہر سینٹ لوئیس میں اس نوجوان کی اپنے انکل سے نیٹ فلکس کے پاس ورڈ پر تکرار ہوئی، تکرار اتنی بڑھی کہ نوجوان بپھرا ہوا کچن سے چھری اٹھا لیا اور انکل کی ناک پر وار کردیا۔

مذکورہ شخص نے پولیس کو بتایا کہ جب وہ سورہا تھا تو اس کے بھانجے نے اس کے نیٹ فلکس کا پاس ورڈ چرانے کی کوشش کی، اس بات پر دونوں میں تکرار شروع ہوئی جس کا اختتام افسوسناک نتیجے پر ہوا۔

پولیس کے پہنچنے سے قبل نوجوان فرار ہوچکا تھا، عمر رسیدہ شخص کو فوری طور پر اسپتال منتقل کردیا گیا جہاں اسے طبی امداد دی جارہی ہے۔

دوسری جانب نیٹ فلکس پاس ورڈ شیئر کرنے والے صارفین کے لیے ایک نئے فیچر کی آزمائش کر رہا ہے۔

اس میں جب بھی کوئی شخص نیٹ فلکس لاگ ان کرے گا تو اس سے پوچھا جائے گا کہ کیا وہ اس اکاؤنٹ کو استعمال کرنے کا مجاز ہے؟ مذکورہ شخص سے اکاؤنٹ کو ویری فائی کرنے کو کہا جائے گا جس کے لیے ایک ٹیکسٹ میسج یا ای میل روانہ کی جائے گی۔

اس ونڈو کو اسکپ کرنے کا آپشن موجود ہوگا تاہم ایسی صورت میں اسٹریمنگ کے دوران نیٹ فلکس کی جانب سے بار بار یاد دہانی کروائی جاتی رہے گی۔ یہ فیچر ابھی آزمائشی مراحل میں ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں