مقبوضہ کشمیر: بھارتی فوج کا جیپ کے آگے نوجوان کو باندھ کر گشت -
The news is by your side.

Advertisement

مقبوضہ کشمیر: بھارتی فوج کا جیپ کے آگے نوجوان کو باندھ کر گشت

سرینگر: مقبوضہ کشمیر میں بھارت نے ظلم و بربریت کی ساری حدود پار کر لیں۔ ضلع بڈگام میں لوگوں کے پتھراؤ سے بچنے کے لیے نوجوان کو فوجی جیپ کے آگے باندھ دیا گیا۔

نہتے کشمیریوں پر بھارت ہر روز ظلم کا نیا حربہ استعمال کرتا ہے۔ بھارتی فورسز کے بدترین تشدد نے ایک بار پھر دنیا کو بھارت کا مکروہ چہرہ دکھا دیا۔

بھارتی فوجیوں نے ضلع بڈگام میں لوگوں کے پتھراؤ سے بچنے کے لیے کشمیری نوجوان کو فوجی جیپ کے آگے باندھ کر شہر کا گشت کیا۔

گشت کے ساتھ ساتھ جیپ سے اعلان بھی نشر کیا جاتا رہا کہ پتھر مارنے والوں کا ایسا حال ہوگا۔

مزید پڑھیں: مقبوضہ کشمیر میں ڈھونگ انتخابات ہڑتال کے باعث ناکام

نوجوان کے ساتھ بدترین سلوک کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہوگئی جسے دیکھ کر لوگ بھارتی بربریت پر چیخ اٹھے۔

سابق وزیر اعلیٰ عمر عبد اللہ نے سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر ٹوئٹ کرتے ہوئے کہا کہ واقعے کی ویڈیو دیکھ کر کشمیری نوجوانوں کا غصہ جائز ہے۔

انہوں نے کہا مذکورہ واقعے کی فوری طور تحقیقات کرنے کی ضرورت ہے۔

یاد رہے کہ گزشتہ چند روز سے مقبوضہ کشمیر میں بھارت کی جانب سے ڈھونگ انتخابات کا انعقاد کیا جارہا ہے جس کا کشمیریوں نے مکمل بائیکاٹ کرتے ہوئے انہیں ناکام بنا دیا۔

ڈھونگ انتخابات کے خلاف حریت رہنماؤں کی اپیل پر مقبوضہ کشمیر میں مکمل ہڑتال رہی۔ اس دوران کاروباری مراکز اور تعلیمی ادارے بند، ٹرانسپورٹ معطل اور سڑکیں سنسان رہیں۔

مزید پڑھیں: بھارتی فوج کی فائرنگ سے 12 کشمیری شہید

اس سے قبل 10 اپریل کو قابض فوج نے مقبوضہ کشمیر کے ضلع بڈگام میں پر امن مظاہرین پر فائرنگ کر کے 12 افراد کو شہید کردیا تھا۔ اس موقع پر پیلٹ گنوں اور آنسو گیس کا بھی وحشیانہ استعمال کیا گیا جس کے نتیجے میں 2 خواتین سمیت 20 مظاہرین زخمی ہوگئے تھے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں