The news is by your side.

Advertisement

برطانیہ: بیرونی سیارے سے آنے کے دعوے دار پراسرار شخص نے کھلبلی مچا دی

لندن : برطانیہ میں ایک شخص نے بیرونی سیارے سے آنے کا دعویٰ کردیا ہے، ایپکس ٹی وی نامی ویب سایٹ نے مذکورہ شخص کا جھوٹ پکڑنے والے آلات سے ٹیسٹ کیا، جس میں وہ حیران کن طور پر پاس کر گیا۔

تفصیلات کے مطابق برطاانیہ میں ایک شخص نے دعویٰ کیا ہے کہ وہ سن 6491 سے سفر کرکے ماضی میں آیا ہے، تاکہ 21 ویں صدیں کے حالات جان سکے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا تھا کہ جیمز اولیور نامی شخص دعوے دار ہے کہ وہ دنیا سے ماضی میں ایک مشن پر آیا تھا لیکن اب وہ 2018 میں پھنس گیا ہے، کیوں کہ اس کی ٹائم مشین ٹوٹ گئی ہے۔

برطانیہ کی پیرانارمل یوٹیوب نامی ویب سایٹ ایپکس ٹی وی نے مستقبل سے آنے والے اس شخص کا جھوٹ پکڑنے والے آلے کی مدد سے امتحان لیا گیا، جس میں وہ پاس ہوگیا۔

جیمز اولیور کا ٹیسٹ لینے والے برطانوی شہری کا کہنا تھا کہ ممکن ہے وہ ’بیک ٹو دی فیوچر فلم‘ کی کوئی کہانی بنارہا ہو، لیکن جو شواہد ملے ہیں اس سے یہ ثابت ہوتا ہے کہ جیمز سچ بول رہا ہے۔

ایپکس ٹی وی پر انٹرویو لینے والے شخص کا کہنا تھا کہ ’جیمز کبھی برمنگھم کی بولی بولتا تھا تو کبھی امریکن اور آسٹریلین زبان میں بات کرتا تھا۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا ہے کہ جیمز کے حوالے سے بہت شک و شبہات ہیں کہ وہ زمین پر رہتا ہے یا کسی اور سیارے سے آیا ہے جیسا کہ اس نے خود کہا کہ ’میرا سیارہ زمین کے برعکس سورج سے بہت دور ہے، اس لیے ہمارا سال بھی بہت لمبا ہوتا ہے‘۔

جیمز اولیور کا کہنا تھا کہ ’پرانی تہذیبوں کے برعکس ہمارے پاس ایسے آلات موجود ہیں، جو سال کا حساب لگا سکتے ہیں‘۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا تھا کہ بیرون دنیا سے آنے والے شخص کی ہر بات کو جھوٹ پکڑنے والی مشین نے سچ بتایا ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں