The news is by your side.

Advertisement

دلہن نے منفرد حق مہر مانگ کر لوگوں کے دل جیت لیے، ویڈیو وائرل

مردان : خیبر پختونخوا کے ضلع مردان میں گذشتہ روز ہونے والی شادی میں دلہن نے انوکھا حق مہر طلب کرکے باراتیوں کو خوشگوار حیرت میں مبتلا کردیا۔

مردان میں پشتو ادب کی پی ایچ ڈی اسکالر دلہن کو پشتو کا پی ایچ ڈی ایک لاکھ کی کتابوں کے عوض بیاہ کر لے آیا، اس منفرد حق مہر کو دولہا دلہن کے عزیز و اقارب اور سوشل میڈیا صارفین نے بھی خوب سراہا۔

اے آر وائی نیوز پشاور کی نمائندہ مدیحہ سنبل سے گفتگو کرتے ہوئے دلہن نائلہ شمال صافی نے کہا کہ جب اُن کے سامنے نکاح نامہ رکھا گیا اور کہا گیا کہ حق مہر میں کیا اور کتنا چاہیے تو اُنہوں نے حق مہر میں ایک لاکھ پاکستانی روپے کی کتابیں طلب کیں۔

دلہن نائلہ نے بتایا کہ پھر مجھے دس پندرہ منٹ وقت دیا گیا کہ مزید سوچ لو اور پھر بتانا کہ کیا چاہیے؟ میں نے پھر سوچا لیکن اس سے اچھا اور کوئی حق مہر ذہن میں نہیں آیا۔

ان کا کہنا تھا کہ ایسا حق مہر مانگنے کی پہلی اور اصل وجہ یہ ہے کہ ہمیں کتابوں کی قدر کرنی چاہیے اور دوسری وجہ یہ کہ غلط رسومات کا خاتمہ بھی ضروری ہے۔

نائلہ شمال صافی چارسدہ کے علاقے تنگی جبکہ ان کے شوہر ڈاکٹر سجاد ژوندون مردان کے علاقے بھائی خان کے رہائشی ہیں۔سجاد ژوندون نے پشتو میں پی ایچ ڈی مکمل کی ہے جبکہ نائلہ شمال صافی اس وقت پی ایچ ڈی کر رہی ہیں۔

اس حوالے سے ڈاکٹر سجاد ژوندون کا کہنا تھا کہ جب اُنہوں نے اپنی منگیتر کے حق مہر کے بارے میں سنا تو اُنہیں خوشی ہوئی کہ اس  عمل سے حق مہر میں مانگی جانے والی زیادہ رقوم کے رواج کا سلسلہ ختم ہوجائے گا۔

واضح رہے کہ اس نئے جوڑے کے نکاح نامے میں مہر کی رقم کے سامنے خانے میں لکھا گیا ہے کہ” ایک لاکھ روپے پاکستانی رائج الوقت مالیت کی کتب” ایسا کوئی ذکر شاید ہی کسی اور کے نکاح نامے میں ہو۔

Comments

یہ بھی پڑھیں