The news is by your side.

Advertisement

وزیر اعظم پراعتماد کا ووٹ : مریم نواز اور بلاول بھٹو کا رد عمل

اسلام آباد : مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز اور پیپلز پارٹی کے چیئر مین بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ آج  لیے جانے والے اعتماد کے ووٹ کی کوئی حیثیت نہیں۔ سینیٹ کی ایک نشست نے سارا نظام بے نقاب کردیا۔

یہ بات انہوں نے قومی اسمبلی میں تحریک عدم اعتماد کے حوالے سے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے اپنے ردعمل میں کہی۔

مریم نواز کا کہنا تھا کہ آج وزیر اعظم نے جھوٹا اعتماد کا ووٹ حاصل کیا ،تحریک انصاف کے اراکین اسمبلی سے گن پوائنٹ پر اعتماد کا ووٹ لیا گیا۔

ن لیگی رہنما نے کہا کہ یوسف رضا گیلانی ایک سیٹ کیا جیتےحکمرانوں کے دماغی توازن خراب ہوگئے اور ان پر پاگل پن سوار ہوگیا، حکمرانوں کو عوامی عدالت میں شکست ہوئی، انہیں بچانے والے اب عوام کا فیصلہ مان لیں۔

مریم نواز نے کہا کہ میرا سر آج فخر سے بلند ہوگیا، آج ن لیگی رہنماؤں نے چند غنڈوں کا مقابلہ کیا اور انہیں بھگا دیا، شیر چند درجن برگرز پربھی بھاری ہوتے ہیں، عوامی نمائندہ عوامی نمائندہ اور ووٹ چور ووٹ چور ہوتا ہے، حیرت تب ہوتی جب ان ووٹ چوروں کا جمہوریت سے دور دور تک کوئی واسطہ ہوتا۔

بلاول بھٹو زرداری

پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کا کہنا تھا کہ ملک میں ڈھائی سال سے بائبرڈ نظام چل رہا ہے،سیاست بھی ایک آرٹ ہے جو ناممکن کو ممکن بنا دیتی ہے، غیرسیاسی سپورٹ سے ہر دروازے بند ہوتے جارہے تھے، ان کا کہنا تھا کہ سیاسی انتقام کا نیا طریقہ کار ڈالا گیا۔

انہوں نے کہا کہ ایک سینیٹ کی سیٹ نے اس پورے نظام کو بے نقاب کیا ہے، ایک سیٹ نے ثابت کردیا وزیراعظم قومی اسمبلی میں اکثریت کھو چکا، اب تو صدر پاکستان نے خود مان لیا عمران خان نے پارلیمانی اکثریت کھو بیٹھے۔

چیئرمین پیپلزپارٹی نے کہا کہ عدم اعتماد کا اظہار کب ہوگا یہ فیصلہ پی ڈی ایم کرے گی، موجودہ حکمران مولانا فضل الرحمان ، نوازشریف اور زرداری کا مقابلہ نہیں کرسکتے۔

وزیراعظم صاحب آپ کو گیلانی صاحب سے سیکھنا چاہیے تھا، عمران خان یوسف رضا گیلانی کی طرح اپنے ممبران کو عزت دیتے تو آج یہ نہ ہوتا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں