The news is by your side.

Advertisement

کراچی میں 10ویں جماعت کا پرچہ لیک ہونے کی تحقیقات کا اعلان

کراچی : میٹرک بورڈ انتظامیہ نے 10ویں جماعت کا پرچہ لیک ہونے کی تحقیقات کا اعلان کرتے ہوئے کہا پرچہ تاخیرسے پہنچنے کے ذمہ دار سینٹر کے سپرنٹنڈنٹ کو قرار دیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق کراچی میں میٹرک کا پہلا پرچہ شدید بدانتظامی کی نذر ہوگیا ، کئی مراکز پر پیپر گھنٹوں تاخیر سے پہنچا، جس کے باعث بچوں کیساتھ آئے والدین کو بھی پریشانی کا سامنا کرنا پڑا۔

شکایات کے بعد میٹرک بورڈ انتظامیہ نے امتحان دورانیےمیں توسیع کر دی اور کہا جن امتحانی مراکز میں پرچہ تاخیر سے پہنچا وہاں اضافی وقت دیا جائے گا ، امیدواروں کو امتحان کیلئےپورے 2گھنٹے دیئےجائیں گے۔

بورڈ انتظامیہ نے 10ویں جماعت کا پیپر لیک ہونے کی بھی تحقیقات کا اعلان کیا جبکہ چیئرمین میٹرک بورڈشرف علی شاہ نے کہا پرچہ تاخیرسے پہنچنے کے ذمہ دارسینٹر کے سپرنٹنڈنٹ ہیں۔

خیال رہے اندرون سندھ میٹرک کے امتحانات مذاق بن گئے، فزکس کا پرچہ امتحان سے قبل ہی آؤٹ ہوگیا اور حل شدہ پرچہ سوشل میڈیا پر گردش کرتا رہا جبکہ لاڑکانہ میں طلبہ موبائل فونز استعمال کرتے رہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں