The news is by your side.

Advertisement

مولانا فضل الرحمان کے کارکنان آج سے پلان بی پرعمل شروع کریں گے

اسلام آباد: جمیعت علمائے اسلام ف کے سربراہ مولانا فضل الرحمان کے کارکنان آج سے پلان بی پرعمل شروع کریں گے، اس سلسلے میں کارکنوں کو ہدایت نامے جاری کردیئے گئے ہیں اور عوام سے سڑکوں پر نکلنے کی اپیل کی ہے۔

تفصیلات کے مطابق جمیعت علمائے اسلام ف کے پلان بی پر آج سے عمل شروع ہوگا، سندھ، پنجاب بلوچستان اور خیبرپختونخوا میں شاہراہیں بند کرنے کا اعلان کرتے ہوئے کارکنوں کو ہدایت نامے جاری کردیئے گئے ہیں اور عوام سے سڑکوں پر نکلنے کی اپیل ہے۔

دوسری جانب صوبائی حکومتوں نے بھی کمرکس لی ہے ، پی ٹی آئی رہنماؤں نے اعلان کیا ہے کہ قانون ہاتھ میں لینے نہیں دیں گے۔

گذشتہ روز جے یو آئی ف کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے کارکنوں سے خطاب کرتے ہوئے کہا تھا کہ نئے محاذ پر جانے کا اعلان کر دیا ہے، ہمارے جاں نثار اور عام شہری سڑکوں پر نکل آئے ہیں ، سڑکوں پر نکلنے والوں کو آپ کے تعاون اوررسد کی ضرورت ہے۔

مزید پڑھیں :  مولانا فضل الرحمان نے دھرنا ختم کرنے کا اعلان کردیا

مولانا فضل الرحمان کا کہنا تھا کہ گرتی ہوئی دیواروں کو ایک دھکا اوردو کا انتظار کر رہے ہیں، جس طرح یہاں آئے اسی طرح دوسرے محاذ پر جائیں گے ، کوشش ہوگی شہروں میں نہ بیٹھیں، ہم دباؤ بڑھانا چاہتے ہیں ناجائزحکومت قبول نہیں۔

بعد ازاں مولانا عطاالرحمان نے چکدرہ چوک، راولپنڈی میں جی ٹی روڈ بند کرنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا تھا کہ شاہراہوں کیساتھ گلی کوچوں کوبھی بند کریں گے، سکھر سے ملتان موٹر وے اور کراچی میں حب ریور روڈ کل بند کی جائے گی۔

دوسری جانب جے یو آئی رہنما راشد سومرو نے کہا تھا کل دوپہر 2 بجے حب ریور روڈ بند کر دیا جائے گا، کشمور سے پنجاب میں داخل ہونے والے روڈ، روہڑی سکھر سے ملتان موٹر وے کو بھی بند کیا جائے گا، آئی جی سندھ نے کارکنان کو روکنے کی ہدایت کی ہے، راستے میں رکاوٹ بنے تو پورا سندھ بند کردیں گے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں