The news is by your side.

Advertisement

کتوں کی تعداد اتنی ہوگئی ہے کہ کے ایم سی کے کنٹرول سے باہر ہے، میئر کراچی

کراچی: میئر کراچی وسیم اختر نے کہا ہے کہ کتوں کے خلاف کارروائی کا اختیار ڈسٹرکٹ میونسپل کارپوریشن کا ہے، کتوں کی تعداد اتنی ہوگئی ہے کہ کے ایم سی کے کنٹرول سے باہر ہے۔

تفصیلات کے مطابق میئر کراچی وسیم اختر نے سندھ مدرستہ الاسلام یونیورسٹی میں خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کتوں کو کچرے کے ڈھیروں سے خوراک ملتی ہے، کتوں کے خلاف کارروائی کا اختیار ڈسٹرکٹ میونسپل کارپوریشن کا ہے۔

انہوں نے کہا کہ نظام بہت خراب ہے، درست کیے بغیر مسائل حل نہیں ہوسکتے ہیں، یہ اہم شہر ہے اسے اسلام آباد سے خصوصی حیثٰت ملنی چاہئے۔

میئر کراچی نے کہا کہ غلطیاں سب سے ہوئیں اب درست کرنے اور آگے بڑھنے کا وقت ہے، صوبے، وفاق قانون سازی، پالیسیاں بناتے ہیں، یہاں الٹا چل رہا ہے۔

مزید پڑھیں: میئرز سمیت تمام بلدیاتی کونسلرز کو آوارہ کتے پکڑنے کا ٹاسک

وسیم اختر نے کہا کہ سیوریج، صفائی، ٹرانسپورٹ، تعلیم ذمہ داری نہیں تو مجھ سے توقع کیسی ہے۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز سندھ حکومت نے رے بیز کیسز سے بڑھتی اموات کے پیش نظر میئر کراچی سمیت تمام بلدیاتی کونسلرز کو آوارہ کتے پکڑنے کا ٹاسک دیا تھا۔

محکمہ بلدیات سندھ نے میئر کراچی سمیت لاڑکانہ، سکھر اور حیدرآباد کے میئرز کو بھی ہنگامی مراسلہ ارسال کیا تھا۔
مراسلے میں ہدایت کی گئی ہے کہ سندھ میں آوارہ کتوں کے خلاف مؤثر مہم شروع کی جائے۔

کتوں کے کاٹے کے کیسز بڑھنے کی روک تھام کے لیے حکومت سندھ کی جانب سے یہ مراسلہ ضلعی میونسپل کارپوریشنز، ڈی سیز، میونسپل کمیٹیز و دیگر کو بھی ارسال کیا گیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں