site
stats
سندھ

گوشت کی 25 دکانیں‌ لوٹنے والا گروہ گرفتار، ملزمان قصائی نکلے

کراچی: شہر قائد میں گوشت کی دکانیں لوٹنے والے قصائی نکلے، پولیس نے 3 ڈاکوؤں کو گرفتار کرلیا، گروہ نے 13 ماہ میں گوشت کی 25 دکانیں لوٹیں۔

تفصیلات کے مطابق کراچی میں گوشت کی دکانیں لوٹے جانے کے پے درپے واقعات پیش آرہے تھے، ڈاکوؤں نے صرف گوشت کی دکانوں کو ہی ہدف بنایا ہوا تھا جس میں ڈاکو نقدی و دیگر قیمتی اشیا سمیت گوشت بھی لے جاتے تھے تاہم اس سلسلے کا اب ڈراپ سین ہوگیا۔

ایس ایس پی ایسٹ فیصل چاچڑ نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے بتایا کہ کراچی میں مشہور گوشت خور گروپ کے 3 ملزمان کو گرفتار کرلیا تاہم ایک فرار ہے، یہ گروہ 4  ملزمان پر مشتمل ہے، چوتھے ساتھی شعیب کی گرفتاری کے لیے چھاپے جارہے ہیں جسے جلد گرفتار کرلیں گے جب کہ گرفتار ہونے والے 3 ملزمان کے نام  محمد وسیم ولد محمد شفیق،محمد زبیر ولد محمد مرسلین اور محمد خالد ہیں۔

انہوں نے بتایا کہ ملزمان کو سی سی ٹی وی فوٹیجز کی مدد سے گرفتار کیا گیا، اس گروہ نے گوشت کی دکانوں کو ہدف بنایا ہوا تھا  تاہم انہوں نے بیکریاں بھی لوٹیں، ملزمان نے رواں سال 5 اور گزشتہ برس گوشت کی 25 دکانوں کو لوٹا۔

پولیس کے مطابق ملزمان خود بھی قصائی ہیں جو نقدی لوٹنے کے ساتھ تکے کھانے کے لیے گوشت بھی لوٹ کر لے جاتے تھے اور پارٹی کرتے تھے، اطلاعات ہیں کہ چوتھا مفرور ملزم شعیب ہی ان کا سرغنہ ہے۔

ملزمان نے اے آر وائی نیوز کو بتایا کہ وہ ڈکیتی کرنے کے بعد پارٹی کرتے تھے،  گوشت بنوا کر کھایا، ڈکیتی کا راستہ ساتھی شعیب نے دکھایا۔

گوشت کی دکانوں پر 13 ماہ میں 25 بار ڈکیتی

ڈاکوؤں کا طریقہ واردات ہمیشہ ایک سا رہتا تھا، ملزمان نے ایک ہی دکان کئی بار لوٹی(دیکھیں ویڈیو)

ویڈیو میں دیکھا جاسکتا ہے کہ ملزمان گلشن اقبال میں ایک دکان میں داخل ہوئے، نقدی لوٹی، گوشت بنوایا اور ساتھ لے گئے، ملزمان نے گلشن اقبال کے بعد عائشہ منزل، سولجر بازار،گلستان جوہر سمیت دیگر علاقوں میں مجموعی طور پر 25 ڈکیتیاں کیں،دو روزہ قبل سولجر بازارمیں بھی ایک گوشت کی دکان لوٹی جو اس سال کی پانچویں واردات تھی۔

اسی سے متعلق: گوشت خور گروہ سرگرم، 27 واں قصائی لٹ گیا

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top