The news is by your side.

Advertisement

ایم کیو ایم اور ق لیگ کے درمیان ملاقات کی اندرونی کہانی

لاہور: آج منگل کو چوہدری شجاعت حسین کی رہائش گاہ پر متحدہ قومی موومنٹ اور مسلم لیگ ق کے رہنماؤں کے درمیان اہم ملاقات ہوئی، اس ملاقات میں دونوں جماعتوں نے حکومتی اتحادی ہونے کے طور پر ایک دوسرے کے ساتھ چلنے کی ضرورت پر زور دیا۔

ذرائع کے مطابق لاہور میں ہونے والی اس ملاقات میں دونوں اتحادیوں نے آئندہ بنے والی سیاسی صورت حال پر ایک دوسرے کے ساتھ چلنے اور ایک دوسرے کے ساتھ تعاون کرنے کا اعادہ کیا، پارٹی قیادت نے باہمی فیصلہ کیا کہ جو بھی سیاسی صورت حال آئندہ دنوں میں بنتی ہے اس پر مشاورت سے فیصلہ کیا جائے گا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ ملاقات میں اس نکتے پر گفتگو ہوئی کہ آئینی، جمہوری اور قانونی طریقے کے علاوہ کوئی اور آپشن کا ملک متحمل نہیں ہو سکتا۔

حکومت سے علیحدگی کا معاملہ زیرغور نہیں، پرویزالہیٰ، عامر خان

ذرائع ایم کیو ایم نے بتایا کہ ہم حکومت کے اتحادی ہیں، ہمارے سامنے عدم اعتماد یا کوئی اور آپشن نہیں آیا۔ ملاقات میں ایم کیو ایم وفد نے کنوینیر ایم کیو ایم ڈاکٹر خالد مقبول کی جانب سے چوہدری شجاعت کی خیریت بھی دریافت کی۔

سندھ میں بلدیاتی خود مختاری اور سپریم کورٹ کے فیصلے پر عمل درآمد کے حوالے سے جدوجہد میں ق لیگ نے ایم کیو ایم کو مکمل تعاون اور حمایت کی یقین دہانی کرائی۔

ملاقات کے بعد ایم کیو ایم وفد نے کنوینیر ایم کیو ایم ڈاکٹر خالد مقبول صدیقی سے رابطہ کیا، اور ملاقات کے حوالے سے قیادت اور رابطہ کمیٹی کو آگاہ کیا، ذرائع کے مطابق اس ٹیلی فونک رابطے میں ن لیگ سے ملاقات سے قبل اہم امور پر تبادلہ خیال ہوا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں