The news is by your side.

Advertisement

کلین کراچی مہم کا ابتدائی خاکہ تیار

کراچی: وفاقی وزیر برائے بحری امور علی زیدی کی زیر صدارت ہونے والے اجلاس میں کلین کراچی مہم کا ابتدائی خاکہ تیار کرلیا گیا، مہم کے لیے ضلع غربی میں 48 مقامات اور ضلع جنوبی و شرقی میں 70 مقامات کی نشاندہی کی گئی ہے۔

تفصیلات کے مطابق کراچی پورٹ ٹرسٹ (کے پی ٹی) آفس میں کراچی صاف کریں مہم کے حوالے سے اجلاس منعقد ہوا۔ اجلاس کی صدارت وفاقی وزیر برائے بحری امور علی زیدی نے کی۔

اجلاس میں تحریک انصاف کے ارکان قومی و صوبائی اسمبلی بھی شریک ہوئے جن میں آفتاب صدیقی، صائمہ ندیم، غزالہ صدف، خرم شیر زمان، عمران شاہ، راجہ اظہر، شہزاد قریشی اور عباس جعفری شامل ہیں۔

اجلاس میں وفاقی حکومت کی کلین کراچی مہم کا ابتدائی خاکہ تیار کرلیا گیا۔ اجلاس میں اس امکان پر بھی غور کیا گیا کہ کلین کراچی مہم کا دورانیہ 2 ہفتے سے بڑھا دیا جائے۔ مہم کے پہلے مرحلے میں 6 اضلاع میں بڑے نالوں کی صفائی کی جائے گی، دوسرے مرحلے میں شاہراہوں اور گلیوں سے کچرا اٹھایا جائے گا۔

کچرا اٹھانے کے فیز میں ڈمپنگ یارڈ خالی کرنا اور اسکولز و پارکس کے اطراف سے کچرا اٹھانا شامل ہے۔ مہم میں حصہ لینے والے وفاقی و بلدیاتی اداروں کے نمائندگان کا بھی اجلاس ہوگا۔ تحریک انصاف ارکان قومی و صوبائی اسمبلی حلقوں میں صفائی کا پلان پیش کریں گے۔ کاروباری و صنعتی اداروں، تنظیموں اور کارپوریٹ سیکٹر کا الگ اجلاس ہوگا۔ وفاقی وزیر علی زیدی تمام اسٹیک ہولڈرز کے ساتھ بھی اجلاس کریں گے۔

خیال رہے کہ وزیر اعظم کی خصوصی ہدایت پر کراچی میں 2 ہفتے کی صفائی مہم کا آغاز کل سے ہوگا، کلین کراچی مہم کی نگرانی وفاقی وزیر علی زیدی کریں گے۔ مہم میں 10 ہزار سے زائد رضا کار، سیاسی کارکن اور عوامی نمائندے حصہ لیں گے۔ وفاقی حکومت کی کلین کراچی مہم کے لیے قومی خزانے سے فنڈز نہیں لیے جائیں گے۔

فرنٹیئر ورکس آرگنائزیشن (ایف ڈبلیو او) کلین کراچی مہم کی کلیدی شراکت دار ہے جو تکنیکی مدد و ہیوی مشینری دے گی۔ کراچی کی کاروباری و صنعتی تنظیمیں بھی کلین کراچی مہم میں حصہ لیں گی۔ مہم میں ایک ہزار ٹریکٹر ٹرالیوں 200 سے زائد ڈمپر لوڈر سے کچرا ٹھکانے لگایا جائے گا۔ ہر بلدیاتی وارڈ میں رضا کار صفائی مہم کا حصہ بنیں گے۔

کلین کراچی مہم میں ضلع غربی میں 48 مقامات کی نشاندہی کی گئی ہے، ضلع جنوبی و شرقی میں 70 مقامات کو منتخب کرلیا گیا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں