The news is by your side.

Advertisement

قائمہ کمیٹی اجلاس: سی پیک پر امریکی مداخلت کے خلاف قرارداد منظور

اسلام آباد: سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے خارجہ کے اجلاس میں پاک چین اقتصادی راہداری (سی پیک) پر امریکا کی مداخلت کو ناقابل قبول قرار دیتے ہوئے قرارداد منظور کرلی گئی۔

تفصیلات کے مطابق سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے خارجہ کے اجلاس میں پاک چین اقتصادی راہداری (سی پیک) میں امریکی مداخلت کے خلاف قرارداد منظور کرلی گئی۔

کمیٹی کی جانب سے جاری کردہ اعلامیے کے مطابق قرارداد میں سی پیک کے معاملے پر امریکا کی مداخلت کو ناقابل قبول قرار دیا گیا ہے۔

اجلاس میں وزیر خارجہ نے کشمیر، کرتار پور اور ایران سعودی ثالثی کے کردار پر بریفنگ دی۔ کمیٹی کی جانب سے کہا گیا کہ حکومت واضح جواب دے کہ پاکستان کسی کے کہنے پر نہیں چلے گا۔

چیئرمین کمیٹی مشاہد اللہ نے کہا کہ پوری قوم کشمیر کے معاملے پر یک زبان ہے۔

اجلاس میں وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے بتایا کہ کشمیر پر عالمی کانفرنس بلانے کی حکمت عملی تیار کی جا رہی ہے، کشمیر کے معاملے پر بیرون ملک ایک وفد بھی بھجوایا جائے گا۔

اجلاس میں قونصل جنرل بارسلونا میں لوگوں سے ناروا سلوک کا معاملہ بھی زیر غور آیا۔ کمیٹی نے معاملے پر فوری طور پر تحقیقات کی ہدایت کرتے ہوئے 15 دسمبر تک رپورٹ طلب کرلی۔

خیال رہے کہ 2 روز قبل واشنگٹن ڈی سی میں تھنک ٹینک میں تقریر کے دوران امریکی نائب وزیر خارجہ ایلس ویلز نے کہا تھا کہ چین اس وقت دنیا میں قرضے دینے والا سب سے بڑا ملک ہے تاہم یہ قرضے دینے کی اپنی شرائط کو شائع نہیں کرتا جس کی وجہ سے پاکستانیوں کو سی پیک کے حوالے سے چینی سرمایہ کاری پر سوالات اٹھانے چاہئیں۔

بعد ازاں پاکستان نے سی پیک پر امریکی نائب وزیر خارجہ کی تنقید کو مسترد کرتے ہوئے مذکورہ تجزیے کو بے بنیاد قرار دیا تھا۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں