The news is by your side.

Advertisement

وزیرِ اعظم کی زیرِ صدارت اجلاس، کاروباری ماحول ساز گار بنانے کے لیے اہم فیصلے

سعودی عرب سے سرمایہ کاری کے لیے معاہدہ رواں ماہ جب کہ یو اے ای کے ساتھ آئندہ ماہ کیا جائے گا

اسلام آباد: ملک میں اقتصادی پیش رفت کے حوالے سے وزیرِ اعظم عمران خان کی زیرِ صدارت اہم اجلاس منعقد ہوا، جس میں وزیرِ خزانہ، مشیرِ تجارت اور اقتصادی ماہرین شریک ہوئے۔

تفصیلات کے مطابق اسلام آباد میں وزیرِ اعظم کی زیرِ صدارت اہم اجلاس منعقد ہوا، جس میں ملک میں کاروبار کے لیے ساز گار ماحول پیدا کرنے کے سلسلے میں پیش رفت کا جائزہ لیا گیا۔

سرمایہ کاروں کے لیے ٹیکسز کی تعداد کو 47 سے کم کر کے 21 کر دیا گیا۔

بریفنگ

اجلاس میں غیر ملکی سرمایہ کاروں کو در پیش مسائل سے نمٹنے کے لیے اقدامات پر بھی تبادلۂ خیال کیا گیا اور کاروباری ماحول ساز گار بنانے کے لیے اہم فیصلے کیے گئے۔

اجلاس میں وزیرِ خزانہ اسد عمر، مشیرِ تجارت عبدالرزاق داوٴد، عشرت حسین، چیئر مین سرمایہ کاری بورڈ ہارون شریف، اور دیگر اقتصادی ماہرین نے شرکت کی۔

اجلاس کے دوران ملک میں کاروبار اور سرمایہ کاری کے لیے فراہم کی جانے والی سہولتوں پر وزیرِ اعظم کو بریفنگ دی گئی، وزیرِ اعظم کو بتایا گیا کہ چین کے ساتھ صنعتی شعبے میں تعاون کے لیے معاہدہ طے پا گیا۔

بریفنگ میں کہا گیا کہ سعودی عرب سے بھی سرمایہ کاری کے لیے معاہدہ اسی ماہ ہوگا، جب کہ یو اے ای کے ساتھ سرمایہ کاری معاہدہ آئندہ ماہ کیا جائے گا۔


یہ بھی پڑھیں:  عوام کو ریلیف فراہم کرنے کے لیے اشیائے خورونوش کی قیمتوں کی موثر نگرانی کا فیصلہ


اجلاس میں بتایا گیا کہ سرمایہ کاروں کے لیے ٹیکسز کی تعداد کو 47 سے کم کر کے 21 کر دیا گیا۔

دریں اثنا، وزیرِ اعظم کی زیرِ صدارت وفاقی کابینہ کا اجلاس کل ہوگا، کابینہ 26 نکاتی ایجنڈے پر غور کرے گی، 172 افراد کی فہرست پر کمیٹی سفارشات ایجنڈے میں شامل ہے۔

اجلاس میں ڈی جی سول ایوی ایشن کا اضافی چارج ، نیشنل ٹیرف کمیشن کی تعیناتی، پاکستان ٹوبیکو کے ڈائریکٹر کی توسیع، اور نئے چیئرمین سی ڈی اے کی تقرری کی منظوری دی جائے گی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں