The news is by your side.

Advertisement

صدارت ختم ہوتے ہی ٹرمپ کی بیوی اور بیٹی میں جھگڑے بڑھ گئے

واشنگٹن : سابق امریکی خاتون اول میلانیا ٹرمپ اور ان کی سوتیلی بیٹی ایوانکا ٹرمپ سے تعلقات خوشگوار نہیں ہیں بلکہ ٹرمپ کے دور اقتدار کے خاتمے کے بعد تلخیوں میں مزید اضافہ ہوگیا ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق امریکا کی سابق خاتونِ اول میلانیا ٹرمپ اور ایوانکا ٹرمپ میں تلخیاں بڑھنے لگی ہیں۔ دونوں ماں بیٹی کے درمیان ناخوشگوار تعلقات کی باتیں زبان زد عام پہلے بھی تھیں تاہم اب یہ کہا جارہا ہے کہ اب ان تلخیوں  نے ٹرمپ کی مدت صدارت کے خاتمے کے بعد شدت اختیار کرلی ہے۔

واضح رہے ایوانکا سیاست میں باضابطہ طور پر آنے کا ارادہ رکھتی ہیں، والد کی مشیر رہنے کے بعد ایوانکا کے حوالے سے یہ خبریں گردش کررہی ہیں کہ وہ آئندہ سینیٹ انتخابات میں فلوریڈا سے امریکی سینیٹ کے لیے انتخاب لڑیں گی۔

سال2020 کے انتخابات میں شکست کے بعد امریکی صدر ٹرمپ کی بیٹی ایوانکا نے اپنی نظریں سینیٹ پر جمالی ہیں۔ ایوانکا ٹرمپ میں فلوریڈا سے امریکی سینیٹ کے لئے انتخاب لڑیں گی۔

واضح رہے کہ سابق امریکی خاتون اول میلانیا ٹرمپ کی زندگی پر لکھی جانے والی کتاب میں انکشاف کیا گیا تھا کہ یہ خاتون اپنی سوتیلی بیٹی کو شہزادی کہہ کر بلاتی ہیں جبکہ ایوانکا ٹرمپ اپنی سوتیلی ماں کو پورٹریٹ کہہ کر پکارتی ہیں کیونکہ میلانیا ٹرمپ بہت کم بولتی ہیں۔

تاہم وائٹ ہاﺅس کی جانب سے اس بات کی تردید کردی گئی تھی میلانیا کے دفتر سے جاری ہونے والے بیان میں کہا گیا کہ میلانیا کی زندگی پر لکھی گئی بائیو گرافی کے مصنف اور پبلشر نے حقائق کی چھان بین نہیں کی اس لیے یہ کتاب جھوٹ پر مبنی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں