The news is by your side.

Advertisement

پنجاب میں ڈاکوراج، لیگی رکن اسمبلی لٹ گئے

لاہور: پنجاب کے دارالحکومت میں ڈاکو راج اپنے عروج پر ہے، مسلح ملزمان نے مال روڈ پر وزیراعلیٰ ہاؤس کے سامنےمسلم لیگ ن کے رکن اسمبلی پنجاب اکرام اللہ نیازی کو بھی لوٹ لیا۔

تفصیلات کے مطابق لاہور میں دندناتے ڈاکوؤں نے جہاں شہریوں کی ناک میں دم کر رکھا ہے وہیں اب ان سے حکومتی شخصیات بھی محفوظ نہیں ہیں، مال روڈ پر ہونے والی ڈکیتی کی واردات میں رکن اسمبلی کو لوٹ لیا گیا۔

مسلم لیگ ن کے ایم اپی اے کو وزیر اعلیٰ ہاؤس کے باہر اُس وقت لوٹا گیا جب وہ اپنی گاڑی میں واپس جارہے تھے۔ اکرام اللہ نیازی کا کہنا ہے کہ ’’دورانِ سفر گاڑی ٹریفک سگنل پر رکی تو مسلح موٹر سائیکل سوار گاڑی کے پاس آئے اور موبائل فون نقدی چھین کر فرار ہوگئے‘‘۔


پڑھیں: ’’ لاہور، سرِ عام لوگوں کو لوٹنے والے ملزمان گرفتار ‘‘


ڈکیتی کی واردات کے بعد لیگی ایم پی اے ایسے خوف زدہ ہوئے کہ میڈیا کو جواب بھی نہ دے سکے، بھکر سے تعلق رکھنے والے رکن پنجاب اسمبلی نے دعویٰ کیا کہ مسلح افراد موبائل اور 15 ہزار روپے لے کر فرار ہوگئے۔

دوسری جانب ڈی آئی جی لاہور نے ڈکیتی واردات کا نوٹس لیتے ہوئے ایس پی سول لائن کو فوری ملزمان کی گرفتاری کے احکامات دیتے ہوئے واقعے کی رپورٹ بھی طلب کرلی۔


مزید پڑھیں: ’’ لاہور: ٹارگٹ کلنگ اوراسٹریٹ کرائم کی وارداتوں میں اضافہ ‘‘


خیال رہے کہ لاہور میں گزشتہ کئی دنوں سے ڈاکو راج کے باعث کئی افراد نقدی، موبائل فونز اور قیمتی اشیاء سے محروم ہوگئے ہیں۔

دریں اثنا ڈکیتی کے معاملے میں پولیس نے رکن پنجاب اسمبلی کو بھی نہیں بخشا اور چوری کی درخواست لکھ کر دستخط کرالیے۔

انعام اللہ نیازی نے بتایا کہ میرے ساتھ گن پوائنٹ پر ڈکیتی کی واردات ہوئی، 2 موٹر سائیکل سواروں نے گن پوائنٹ پر نقدی اور موبائل چھینا اور فرار ہوگئے،میری ڈکیتی کی درخواست پولیس نے لکھی جس پر میں نے اعتبار کرتے ہوئے دستخط کر دئیے۔

انہوں نے  ایس پی کو ٹیلی فونک کیا اور گلہ کیا کہ ایس ایچ او زیادہ ہوشیار بن رہا ہے،شوکاز نوٹس سے بچنے کے لیے پولیس ڈکیتی کے بجائے چھینا جھپٹی کی ایف آئی آر دے دیتی ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ اگر میرے ساتھ انصاف نہ ہوا تو پنجاب اسمبلی میں  تحریک استحقاق جمع کراؤں گا۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں