The news is by your side.

Advertisement

سرکاری اسپتال کا ڈاکٹر ایک دن حاضری کے بعد تین دن غائب ہوتا ہے، میاں اسلم اقبال

لاہور: وزیر اطلاعات پنجاب میاں اسلم اقبال نے کہا ہے کہ سرکاری اسپتالوں میں تعینات ڈاکٹر ایک دن حاضر ہوکر تین روز تک غائب رہتا ہے۔

لاہورمیں صحت انصاف کارڈ کی تقسیم کے حوالے سے منعقدہ تقریب میں گفتگو کرتے ہوئے اُن کا کہنا تھا کہ غریب آدمی امیدکےساتھ اسپتال جاتاہےاوروہاں ڈاکٹرمیسرنہیں ہوتا۔

میاں اسلم اقبال کا کہنا تھا کہ پتہ چلاکہ ایک ڈاکٹرایک دن آتاہےاور 3،3دن نہیں آتا۔ انہوں نے سوال کیا کہ کیا حکومت کو حق حاصل نہیں ایسے ڈاکٹرز کے خلاف ریفارمز لے کر آئے۔

صوبائی وزیر اطلاعات کا کہنا تھا کہ  ڈاکٹرسےاگرحاضری کاپوچھ لیاتوکیا یہ غلط کیا؟، سرکاری اسپتال کے ایک بیڈ کاسالانہ خرچہ45لاکھ روپےہے، ڈاکٹراورسرجن بتائیں انہوں نے کتنے آپریشن کیے۔ میاں اسلم اقبال کا کہنا تھا کہ ہم نے45ارب کےاخراجات کم کئےہیں۔

اُن کا کہنا تھا کہ  وزیراعظم نےکابینہ میں پہلےقدم اٹھایا، ہم  اپنےاردگردبم پروف دیواریں تونہیں بنارہے، ہمیں عام آدمی کےدرد کاپتہ ہے، اُن کے لیے ریفامز لے کر آرہے ہیں،  آرڈیننس سے وزیروں کانہیں بلکہ غریبوں کافائدہ ہوگا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں