The news is by your side.

Advertisement

سابق انگلش کپتان ویرات کوہلی کی حرکت پر نالاں، بڑا مطالبہ کردیا

لندن: سابق انگلش کپتان مائیکل وان، ویرات کوہلی کے طرز عمل پر سخت نالاں دکھائی دیتے ہیں اور انہوں نے آئی سی سی بڑا مطالبہ کردیا ہے۔

غیر ملکی میڈیا رپورٹ کے مطابق مائیکل وان نے کہا کہ کیپ ٹاؤن ٹیسٹ میں ویرات کوہلی کا غیر مہذبانہ طرز عمل دیکھ کر دھچکا لگا، بطور کھلاڑی اس طرح کی صورت حال میں مضطرب ہونا یقینی ہوتا ہے مگر جب آپ ایک ٹیم لیڈر ہو اور میدان میں موجود مائیک پر اس طرح کی غیر شائستہ گفتگو کرینگے تو پابندی کا سامنا کرنا پڑے گا۔Imageسابق انگلش کپتان نے کوہلی کے غیر ذمے دارانہ رویئے پر آئی سی سی کو فوری اقدام کرنے ضرورت پر زور دیتے ہوئے کہا کہ انٹرنیشنل کرکٹ کونسل کے لئے بہت ضروری ہوگیا ہے کہ وہ کوہلی کے اس طرز عمل کا نوٹس لیں۔

مائیکل وان کا کہنا تھا کہ ویرات کوہلی کے اس غیر مہذبانہ رویئے پر آئی سی سی ان پر جرمانہ عائد کرے یا پھر ان پر میچز کی پابندی لگائے، یہ آئی سی سی پر منحصر ہے۔

واضح رہے کہ بھارت اور جنوبی افریقا کےدرمیان جاری تیسرے ٹیسٹ میچ میں بھارت کی ممکنہ شکست پر بھارتی کرکٹرز آن فیلڈ آپے سے باہر ہوگئے تھے، اننگز کے 21ویں اوور میں فیلڈ ایمپائر نے جنوبی افریقا کے کپتان ڈین ایلگر کو روی چندرا ایشون کی گیند پر ایل بی ڈبلیو قرار دیا۔

جنوبی افریقہ کے کپتان نے اس فیصلے پر ریویو لیا تو ریویو میں فیصلہ واپس ہوگیا کیونکہ گیند اسٹیمپ کے اوپر سے گزررہی تھی، اس فیصلے پر ویرات کوہلی نے وکٹ کے قریب موجود مائیک میں کہا کہ آپ کو تمام کھلاڑیوں پر نظر رکھنا ہوتی ہے صرف مخالف کھلاڑیوں پر نہیں۔

کے ایل راہول کا کہنا تھا کہ پورا ملک 11 کھلاڑیوں کے خلاف کھیل رہا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں