The news is by your side.

Advertisement

ایرانی قوم اپنی پسند کی قیادت کا انتخاب کرے، امریکی وزیر خارجہ

واشنگٹن: امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے کہا ہے کہ ایرانی عوام کو اپنی پسند کی قیادت کا انتخاب کرنا چاہئے، یہ ایرانی عوام کا حق بھی ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق واشنگٹن میں وزارت خارجہ کے دفتر میں صحافیوں سے بات کرتے ہوئے مائیک پومپیو نے کہا کہ ہم نے ایران سے جو مطالبات کئے ہیں وہ مشکل نہیں۔

امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے کہا کہ تہران کے بارے میں امریکا اور یورپی ملکوں کے درمیان جلد سفارتی ہم آہنگی پیدا ہوجائے گی۔

مائیک پومپیو کے مطابق ایک ایسا گروپ موجود ہے جو جو مشترکہ مفادات اور اقدار پر کام کرتے ہوئے ہمیں اسلامی جمہوریہ ایران کی طرف سے لاحق خطرات کا تدارک کرنے کے لیے متحد کرسکتا ہے۔

واضح رہے کہ امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو کا کہنا تھا کہ امریکا ایران پر تاریخ کی سخت ترین پابندیاں عائد کرے گا، پابندیوں کے بعد ایران کو اپنی معیشت کی بقا کا مسئلہ پڑ جائے گا۔

مزید پڑھیں: امریکا ایران پر تاریخ کی سخت ترین پابندیاں عائد کرے گا، امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو

مائیک پومپیو نے کہا تھا کہ ایران کے میزائل تجربات قبول نہیں ہیں، ہم ماضی کی غلطیوں کو نہیں دہرائیں گے، امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ ایران پر نئے معاہدے کے لیے تیار ہیں، نئے معاہدے کے لیے ایران کو 12 شرائط پوری کرنا ہوں گی اور شام سے ایرانی فورسز کے انخلا اور یمن میں حوثی باغیوں کی حمایت کو ختم کرنا ہوگا۔

امریکی وزیر خارجہ کے مطابق ایران خطے میں پراکسی وار کا سبب بن رہا ہے، ایران کو دھمکی آمیز رویہ ترک کرنا ہوگا، ایران نے جوہری معاہدے کے دوران مشرق وسطیٰ میں اثرورسوخ بڑھایا، ایران کو دوبارہ جوہری تجربوں کی جانب نہیں جانے دیں گے، ان کو یورینیم کی افزودگی روکنی ہوگی۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کےلیے سوشل میڈیا پرشیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں