شام جانے والا روسی فوجی طیارہ گرکرتباہ،92افراد ہلاک -
The news is by your side.

Advertisement

شام جانے والا روسی فوجی طیارہ گرکرتباہ،92افراد ہلاک

ماسکو: روسی فوجی جہاز سمندر میں گر کر تباہ ہوگیا جس کے نتیجے میں اہلکاروں، آرمی میوزک بینڈ اور صحافیوں سمیت 92 افراد جاں بحق ہوگئے ، طیارہ روس سے شام کے لیے روانہ ہوا تھا۔

روسی میڈیا کے مطابق فوجی جہاز انٹرنیشنل ائیرپورٹ سے شام کے لیے روانہ ہوا تو بحرا سود کے قریب گر کرتباہ ہوا، جس میں روسی فوج، آرمی بینڈ اور صحافیوں سمیت 92 افراد سوار تھے جو حادثے میں ہلاک ہوگئے ہیں۔

روسی وزیر دفاع نے حادثے کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ ’’بدقسمت طیارے کی منزل شام تھی، تاہم یہ یوون فائیو فورٹیک کی پرواز ٹیک آف کے سات منٹ بعد ہی ریڈار سے غائب ہوگئی تھی‘‘۔

russia6

روسی میڈیا کے مطابق تباہ شدہ طیارے کا چیسس ساحل سے ڈیڑھ کلومیٹر کے فاصلے سے مل گیا تاہم ریسکیو کا عمل جاری ہے۔russian8

طیارے میں سوار تمام افراد سال نو کا جشن منانے شام کے شہرلتاکیہ میں روسی ائیر بیس جارہےتھے مگر بدقسمت طیارہ حادثے کا شکار ہوگیا اور اس میں سوار تمام ہی لوگ ہلاک ہوگئے۔

russian7

ا س سے قبل روسی وزارت دفاع نے اس بات کی تصدیق کی تھی کہ ٹی یو-154 طیارہ بحیرہ اسود کے ساحل پر واقع روس کےشہر سوچی سے اڑان بھرنے کے بعد ریڈار سے غائب ہوا۔ رپورٹس کے مطابق طیارہ جنگ زدہ ملک شام  جا رہا تھا،جہاں روس کے فوجی اڈے پر سال نو کے موقع پر جشن کی تقریبات کا اہتمام کیاگیا تھا۔

russian5

طیارے میں 9 صحافیوں اور فوج کے ایک میوزیکل گروپ کے افراد بھی سوار تھے،وزارت دفاع کے مطابق میوزیکل گروپ سال نو کے موقع پر منائے جانے والے جشن میں فن کا مظاہرہ کرنےجا رہے تھے۔ رپورٹس کے مطابق طیارہ سوچی کی ایئرپورٹ سے اڑان بھرنے کے بعد مقامی وقت صبح 5 بج کر 40 منٹ پر ریڈار سے غائب ہوا۔

russian2

یاد رہےکہ رواں ماہ 19 دسمبر کو سائیبریا کے شمال مشرقی علاقے میں روس کے فوجیوں کو لے جانے والے ایک طیارے نے کریش لینڈنگ کی تھی۔حادثے میں 32 فوجی اہلکار زخمی ہوئے تھے۔

مزید پڑھیں: سائبیریامیں روسی ہیلی کاپٹرگرکر تباہ،19افراد ہلاک

واضح رہے کہ رواں سال اکتوبر میں سائبیریا کے شمال مغربی علاقے میں خراب موسم کی وجہ سے ہیلی کاپٹر گرکرتباہ ہونے سے 19افراد ہلاک ہو گئےتھے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں