The news is by your side.

Advertisement

سانحہ منیٰ : سابق وزیراعظم یوسف رضا گیلانی کےبھانجےاسدگیلانی شہید

منیٰ : سانحہ منیٰ میں سابق وزیراعظم یوسف رضا گیلانی کےبھانجےاسدگیلانی شہید ہوگئے، شہید ہونے والے پاکستانیوں کی تعداد آٹھ ہو گئی.

جبکہ سانحہ منیٰ کے بعد76پاکستانیوں کو تلاش کرلیا گیا، جبکہ تین سوسولہ پاکستانی تاحال لاپتہ ہیں،

تفصیلات کے مطابق اسد مرتضٰی گیلانی کےوالد وجاہت نے ان کی شہادت کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا ہے کہ انہیں کچھ دیر قبل ہی اسد مرتضی گیلانی کے شہید ہونے کی خبر موصول ہوئی ہے۔

اسد مرتضی گیلانی رکن قومی اسمبلی رہ چکے ہیں اس کے علاوہ وہ وفاقی پارلیمانی سیکرٹری مذہبی امور کے عہدے پر بھی فائز رہ چکے ہیں۔

واضح رہے کہ سانحہ اسد مرتضی گیلانی منیٰ میں پیش آنے والے دلخراش واقعے میں لاپتہ ہو گئے تھے اور پاکستانی حکام کی جانب سے ان کی تلاش جاری تھی تاہم اب اسد مرتضیٰ گیلانی کے اہلخانہ کو ان کی شہادت سے متعلق آگاہ کر دیا گیا ہے۔

اسد مرتضی گیلانی کے بھائی ابوالحسن گیلانی نے بھی اسد مرتضی گیلانی کے شہید ہونے کی تصدیق کی ہے۔

واضح رہے کہ سانحہ منیٰ میں اب تک 7 پاکستانیوں کی شہادت کی تصدیق ہو چکی ہے جبکہ 316 لاپتہ ہے جن کی تلاش کا کام جاری ہے۔

ترجمان دفتر خارجہ کا کہنا ہے کہ سعودی عرب سفارتخانے سے مسلسل رابطے میں ہیں،پاکستانیوں کی تفصیلات معلوم کررہے ہیں.

سانحہ منیٰ کے بعد سیکڑوں حجاج ایسے ہیں جن کا کچھ پتہ نہیں کہ وہ کہاں ہیں لاپتہ حجاج میں تین سو گیارہ پاکستانی بھی شامل ہیں.

ڈی جی حج ابو احمد عاکف کے مطابق تین سو ستاسی پاکستانی لاپتہ تھے جن میں سے چھہتر پاکستانیوں نے رابطہ کرلیا ہے جبکہ دیگر کی معلومات حاصل کی جارہی ہے.

سانحہ منیٰ میں اب تک سات پاکستانی شہداءکی تصدیق ہوئی ہے جو ان کےاپنےرشتےداروں نےکی ہے، سعودی حکام نےپاکستانیوں سے متعلق معلومات جلد فراہم کرنے کاوعدہ کیاہے،

واضح رہے کہ منی میں مناسک حج کے دوران شیطان کو کنکریاں مارنے کے دوران بھگدڑ مچ گئی، جس کے نتیجے میں متعدد پاکستانیوں سمیت سات سو سے زائد حجاج کرام شہید جبکہ آٹھ سو تریسٹھ حجاج زخمی ہوگئے تھے.

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں