The news is by your side.

Advertisement

انٹرسٹی بس سروس: سندھ حکومت مسافروں کی انشورنس کرے گی

کراچی : صوبائی وزیر برائے ٹرانسپوٹ ناصرشاہ نے سندھ اسمبلی کے اجلاس میں کہ کہا کہ انٹرسٹی بسوں کےمسافروں کیلئےانشورنس اسکیم لانے کا فیصلہ کیا ہے تاکہ عوام بے فکری سے سفر کریں.

مزید تفصیلات کے مطابق صوبائی وزیر ٹرانسپوٹ ناصر شاہ نے سندھ اسمبلی کے اجلاس میں اس بات کا اعتراف کیا کہ شہید بے نظیر بھٹو انٹرسٹی بس منصوبہ التوا کا شکار ہے تاہم انہوں نے اس کی تکمیل کی بھی یقین دھانی کروائی.

صوبائی وزیرناصر شاہ نے کہا کہ اس منصوبے کے تحت 100بسیں چلائی جانی تھیں ، یہ پروجیکٹ 2013میں شروع کیا گیا جبکہ 2014میں منصوبےکوپبلک پرائیوٹ پارٹنرشپ کےتحت کیاگیا ، تاہم یہ منصوبہ تعطل کا شکار ہونے کے باعث وقت پر وقوع پذیر نہیں ہوسکا کیوں کہ سرمایہ کار کمپنی کام چھوڑ کر چلی گئی تھی لہذا اس پریشانی کے پیش نظر منصوبہ کو وقتی ختم کرنا پڑا تاہم اب  اس منصبے کا آغازکردیا گیا ہے .

انہوں نے سندھ اسمبلی کے ایوان میں‌ عوام کوخوش خبری سنائی کہ محکمہ ٹرانسپورٹ سندھ نےقانون کامسودہ تیارکرلیا ہے انہوں نے کہا کہ انٹرسٹی بسوں کےمسافروں کیلئے محکمہ ٹرانسپوٹ نے انشورنس اسکیم لانے کا فیصلہ کرلیا ہے.

دوسری جانب سندھ اسمبلی کی کاروائی کے دوران متحدہ قومی موومنٹ پاکستان کی خاتون رکن ہیر سوہو نے اعتراضی نکتہ اُٹھاتے ہوئے کہا کہ آج کے ایجنڈے کی کاپی میں‌ دورانیہ وقفہ سوالات کے لئے لکھے گئے سوال میں‌ کراچی سے باہر کے علاقے کو اندورن سندھ لکھا گیا، انہوں نے کہ اگر ایم کیو ایم کوئی بات کہے تو حرام جبکہ وہی بات اگر کوئی اور بولے تو حلال ، ان کا کہنا تھا کہ آخر یہ تضاد کیوں ہے.

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں