The news is by your side.

Advertisement

چیف سلیکٹر مصباح الحق کا سری لنکاکےخلاف ون ڈےسیریز کے لئے ٹیم کااعلان

لاہور : چیف سلیکٹر مصباح الحق نے سری لنکا کے خلاف ہوم سیریز کیلیے پاکستان ون ڈے ٹیم کا اعلان کردیا، سرفراز احمد کپتان اور بابر اعظم نائب کپتان ہوں گے جبکہ سری لنکا کے خلاف ٹی ٹوئنٹی ٹیم کا اعلان بعد میں کیا جائے گا۔

تفصیلات کے مطابق چیف سلیکٹر اور ہیڈ کوچ مصباح الحق کی جانب سری لنکا کے خلاف ون ڈے سیریز کیلئے 16 رکنی قومی ٹیم کا اعلان کردیا گیا ، پاکستان سری لنکا ون ڈے سیریز میں پاکستان کی قیادت سرفرازاحمد کریں گے جبکہ بابراعظم نائب کپتان ہوں گے۔

بابراعظم، عابد علی، فخر زمان، آصف علی، حارث سہیل، محمد حسنین ، افتخار احمد ،عماد وسیم، امام الحق، محمد عامر، محمد نواز، محمد رضوان اسکواڈ میں شامل ہیں جبکہ شاداب خان، عثمان شنواری اور وہاب ریاض اسکواڈ کا حصہ ہوں گے۔

مصباح الحق نے کہا حسن علی کوفٹنس مسائل کی وجہ سے شامل نہیں کیا گیا، احمد شہزاد اور عمر اکمل کی پی ایس ایل میں پرفارمنس اچھی ہے، فخر زمان  کی پرفارمنس ڈاؤن ہوئی ہے لیکن ان کی47 کی اوسط ہے، فخرزمان 10اوور کھیل جائیں تومیچ جیتنے کے چانس بڑھ جاتے ہیں۔

چیف سلیکٹر کا کہنا تھا کہ شعیب ملک ون ڈے سے ریٹائر ہوچکے ہیں، محمد حفیظ، شاہین آفریدی، حسن علی ٹیم میں شامل نہیں، مستقبل کی پلاننگ ضرور کی جانی چاہیے اور پرفارمنس دینے والوں کو اوپر لازمی لانا چاہیے۔

انھوں نے کہا کہ جو اچھا ہے وہ سری لنکا اور آسٹریلیا کیخلاف کھیل سکتاہے، کھلاڑی کو چیک کرنے کیلئے ایسا نہیں ہونا چاہیے کہ تجربات کرتے رہیں۔

مصباح الحق کا کہنا تھا کہ عابد علی کی فٹنس بہتر ہے،ٹیم میں پرفارمنس ادا کریں گے، ورلڈکپ سے پہلے پاکستان ٹیم نے مختلف ٹیموں سے سیریز کھیلنی ہے، محمد حفیظ اور شعیب ملک کی آخری ٹی 20میچز میں اچھی پرفارمنس رہی۔

ہیڈکوچ نے کہا فخرزمان کے بیٹنگ مسائل حل کررہے ہیں،وہ ہمارا امپیکٹ پلیئر ہے، فخر زمان کو ضائع کرنے کے بجائے ان پر محنت کر رہے ہیں، فخر ایسا بلے باز ہے 10اوور کھیل جائے تو ٹیم کے جیتنے کا چانس بن جاتا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ماضی دیکھیں تو جنوبی افریقا میں پاکستان ٹیم نے کتنی بار 300سے زائد رنز کئے؟ پہلے ٹیم300 سے زائد رنز کرنے پر میچ جیت جاتی تھی، انگلینڈ کیخلاف 300سے زائد رنز کے باوجود میچز جیت نہیں سکےتھے۔

مصباح الحق نے مزید کہا کہ فیلڈنگ اور بالنگ کو بہتر کرنے کی ضرورت ہے، دنیا کی ٹیمیں تین تین سوکررہی تھیں، قومی ٹیم 230 کرکے بھی جیت رہی تھی، کم اسکور کرکے بھی میچ جیتنے کی وجہ ہماری بولنگ مضبوط تھی۔

ہیڈ کوچ کا کہنا تھا کہ انگلینڈ سے سیریز میں ٹیم300 کرکے بھی ہاری، بولنگ پر توجہ کی ضرورت ہے، ہمارے بلے باز 90 کے اسٹرائیک ریٹ اور 50 کی اوسط سےکھیل رہے ہیں ،بلے بازوں سے اس سے زیادہ آپ کیا توقع کرسکتے ہیں، بولنگ مضبوط کرنی ہے۔

مصباح نے کہا جو کھلاڑی کارکردگی دکھائے گا اس کیلئے دروازے کھلے ہیں، سرفراز احمد ایسے کھلاڑی ہیں ، اگر بیٹنگ میں 100فیصد موقع ملے تو پرفارم کرکے دے گا، سرفراز نے فٹنس، بیٹنگ پر محنت کی ہے،ان سے امید ہے، ان سےغلطی یہ ہوئی کہ اپنے آپ کو بیٹنگ میں صرف 30 فیصد موقع دیا۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ فہیم اشرف کی بیٹنگ اچھی کرنےکے لئے کام کررہے ہیں ، محمد نواز کو تیار کر رہے ہیں تاکہ عماد وسیم کا بیک اپ پلیئر ہو، فہیم اشرف  اور عامر یامین دونوں کو دیکھ رہےہیں، محمدحسنین کوزیادہ سےزیادہ چانس دینے کی پوری کوشش ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں