The news is by your side.

Advertisement

امریکی کمپنی کو کرونا ویکسین ہنگامی بنیادوں پر تیار کرنے کی اجازت مل گئی

واشنگٹن: امریکا کے محکمہ فوڈ اور ڈرگ ایڈمینسٹریشن نے ہنگامی بنیادوں پر بائیوٹک کمپنی ’موڈیرنا‘ کو کرونا ویکسین تیار کرنے کی اجازت دے دی۔

کمپنی کی جانب سے منگل کے روز جاری اعلامیے میں بتایا گیا ہے کہ امریکا کے محکمہ فوڈ اور ڈرگ نے اجازت دی ہے کہ موڈیرنا ہنگامی بنیادوں (فاسٹ ٹریک) پر کرونا ویکسین کا ٹرائل کرے۔

رپورٹ کے مطابق موڈیرنا کمپنی بھی دنیا بھر میں 2 لاکھ 85 ہزار سے زائد مریضوں کو موت کے منہ میں لے جانے والے وائرس سے بچاؤ کی ویکسین تیار کررہی ہے۔

میڈیا رپورٹ کے مطابق ریگولیٹری کی جانب سے موڈیرنا کو اجازت دینے کا اقدام کے عمل کو تیز کرنا ہے۔

مزید پڑھیں:کرونا ویکسین کب تک تیار ہوسکتی ہے؟‌ عالمی ادارہ صحت کا چونکا دینے والی وضاحت

امریکا کی سرکاری ایجنسی نے فوڈ اینڈ ڈرگ اتھارٹی کے ماتحت ویکسین کا مشاہدہ ہنگامی بنیادوں پر کیا اور 6 ماہ کے مختصر عرصے میں اس کے نتائج پر غور کے بعد ویکسین تیار کرنے کی اجازت دی۔

اس وقت دنیا بھر میں کرونا کی 100 سے زائد ویکسین کی تیاری جاری ہے جن میں سے کچھ کلینیکل ٹرائلز پر بھی ہیں البتہ عالمی ادارہ صحت ڈبلیو ایچ او نے کہا ہے کہ ویکسین 12 ماہ سے قبل تیار ہونا ناممکن ہے۔

عالمی ادارہ صحت کی کرونا کو دیکھنے والی ٹیم کے سربراہ نے گزشتہ دنوں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا تھا کہ ’کرونا ویکسین کی تیاری پانچ مراحل میں ہوگی، 2021 سے قبل ویکسین کی مارکیٹ میں دستیابی بہت مشکل نظر آتی ہے‘۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں