The news is by your side.

Advertisement

سرفراز احمد سے کپتانی واپس لینے کا معاملہ، معین خان نے نیا پینڈورا باکس کھول دیا

لاہور: قومی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان اور وکٹ کیپر معین خان نے سرفراز احمد کو کپتانی سے ہٹانے کے فیصلے کو احمقانہ قرار دے دیا۔

تفصیلات کے مطابق معین خان کا کہنا تھا کہ مصباح الحق نے شکست کے دباؤ سے گھبرا کر سرفراز احمد کو ہٹانے کا احمقانہ فیصلہ کیا۔

اُن کا کہنا تھاکہ 11سیریزمیں کامیابی دلانے والےکپتان کو ایک سیریزمیں ناکامی پرہٹادیا جبکہ مصباح نے سرفراز کے برابر میں بیٹھ کر اُس کی حمایت بھی کی تھی۔

معین خان کا کہنا تھا کہ مصباح نے پیچھےسے معاملات طے کر کے سرفرازکو کپتانی سےہٹوایا، ہیڈکوچ، چیف سلیکٹر کا عہدہ ایک ہی شخص کو دینے سے پاکستان کا کرکٹ مزید نیچے جائے گا۔

مزید پڑھیں:سرفراز احمد کو دیگر کھلاڑیوں کے دھکے دینے کی ویڈیو وائرل

اُن کا کہنا تھا کہ نیا بورڈ تبدیلی کی باتیں تو کررہا ہے لیکن اقدامات ایسے نظر نہیں آرہے، مصباح الحق اور وقار یونس نے سرفراز کو کبھی پسند ہی نہیں کیا، اگر میرٹ کا قتل عام ہوتا رہا تو ٹیم کبھی بھی نہیں جیت سکے گی۔

یاد رہے کہ آج پی سی بی نے سرفراز احمد سے تینوں فارمیٹ کی قیادت واپسی لیتے ہوئے اظہر علی کو ٹیسٹ اور بابر اعظم کو ٹی ٹوینٹی ٹیم کا کپتان مقرر کیا، ذرائع کے مطابق آسٹریلیا کے خلاف ہونے والی سیریز میں بھی سرفراز کو شامل نہیں کیا گیا، اُن کی جگہ وکٹ کپینگ کے لیے ٹیسٹ میچز میں محمد رضوان اور ٹی ٹوئنٹی میں کامران اکمل شامل ہوں گے۔

سرفراز احمد کو کپتانی سے ہٹانے کا فیصلہ احمقانہ ہے

سرفراز احمد کو کپتانی سے ہٹانے کا فیصلہ احمقانہ ہے — مصباح الحق اور وقار یونس نے سرفراز کو کبھی پسند نہیں کیا — میرٹ کا قتل عام ہوتا رہا تو ٹیم کبھی نہیں جیت سکے گی، معین خان#ARYNews #SarfarazAhmed

Posted by ARY News on Friday, 18 October 2019

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں