موبائل کا استعمال، سفاک ماں نے 7 سالہ بیٹی کو قتل کردیا -
The news is by your side.

Advertisement

موبائل کا استعمال، سفاک ماں نے 7 سالہ بیٹی کو قتل کردیا

بیجنگ: چینی خاتون اور سفاک ماں نے موبائل فون پر زیادہ گیم کھیلنے کی وجہ سے اپنی بیٹی کو قتل کردیا۔

چینی میڈیا کے مطابق 29 سالہ خاتون نے ہفتے 10 نومبر کی صبح اپنی 7 سالہ بیٹی کو کوئی کام بولا اور جب اُس نے ماں کے حکم کو نظر انداز کیا تو اُسے غصہ آگیا۔

خاتون کی شناخت گاؤ کے نام سے ہوئی جس نے دورانِ حراست اپنے جرم کا اعتراف کرتے ہوئے پولیس کو بیان دیا کہ جب بیٹی نے بات نہیں مانی تو پھر میں نے اُسے غصے کی حالت میں مارنا شروع کیا مگر وہ اس دوران ہنستی رہی۔

قاتل ماں کا کہنا تھا کہ ’میں بیٹی کو اکثر تنبیہ کرتی تھی وہ موبائل پر زیادہ گیم نہ کھیلے مگر اُس نے بات نہیں سنی اور میرے کہنے پر الٹے سوالات کرنے شروع کردیے‘۔

مزید پڑھیں: رونا بند کرو، ظالم ماں نے شیر خوار بچے کو قتل کردیا

گاؤ کا کہنا تھا کہ جب میں باورچی خانے سے چھری لینے گئی تو بیٹی کمرے میں چھپ گئی تھی مگر میں نے اُسے تلاش کیا اور پہلے اس کے پیٹ پر وار کیا بعد میں اُس کے گلے پر بھی اسے پھیر دیا۔

پولیس حکام کے مطابق مقتولہ بیٹی پرائمری اسکول میں زیر تعلیم تھی، اُس نے بیماری کا عذر پیش کر کے آج چھٹی کی اور صبح سے ہی وہ ماں کے موبائل پر گیم کھیلنے میں مصروف تھی۔

یہ بھی پڑھیں: امریکا: 15 سالہ لڑکی نے ماں اور بہن کو قتل کر ڈالا

پولیس حکام کے مطابق گاؤ کا شوہر ایک سال قبل بیٹی اور ماں کو چھوڑ کر ملازمت کے لیے شہر سے باہر گیا اور پھر اُس نے طلاق نامہ بھیج دیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں