The news is by your side.

Advertisement

کراچی : سنگدل ماں نے بیٹی کو پیدا ہوتے ہی چلتی ایمبولینس سے سڑک پر پھینک دیا

کراچی : سنگدل ماں نے بیٹی کو پیدا ہوتے ہی چلتی ایمبولینس سے سڑک پر پھینک دیا،پولیس نے بچہ پھینکنے والی خاتون اور اس کی ماں کو گرفتار کرلیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق شہرقائد میں نومولود بچوں کی لاشیں پھینکنے کا سلسلہ تھم نہ سکا ، ایسا ہی ایک واعہ فرئیر کےعلاقے میں پیش آیا ، جہاں ماں نے بیٹی کو پیدا ہوتے ہی سڑک پر پھینک دیا، پولیس نے بچہ پھینکنے والی خاتون اور اس کی ماں کو گرفتار کرلیا ہے۔

اس حوالے سے ایک رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ سال2021 میں 220 سے زائد نومولود بچوں کی لاشیں ملیں اور رواں سال اب تک 68 نومولود بچوں کی لاشیں مل چکی ہیں۔

رپورٹ کے مطابق صرف 2 ماہ 13دن میں 68 بچوں کی لاشوں کوپھینکاگیا، ایدھی فاؤنڈیشن نے 58 اور چھیپا فاؤنڈیشن نے 10لاشیں اٹھائیں۔

پولیس حکام کا کہنا ہے کہ فرئیرکےعلاقےمیں انتہائی افسوسناک واقعہ پیش آیا، خاتون نے چلتی ایمبولینس میں بچی کوجنم دیا اور بچی پیدا ہوتے ہی ایمبولینس سے ہاتھ باہر نکال کر سڑک پرپھینک دی۔

پولیس حکام نے بتایا کہ سی سی ٹی وی فوٹیج کی مدد سے پولیس نے گرفتاریاں کی۔

بلقیس ایدھی اوررمضان چھیپا متعدد مرتبہ قوم سےاپیل کرچکے ہیں کہ بچوں کو پھینکا نہ جائے بلکہ جھولےمیں ڈال دیاجائے، پاکستان میں لاکھوں لوگ اولادکی نعمت سےمحروم ہیں، بچے گود لینے والوں کی بڑی تعداد فلاحی ادارے سے رابطے میں رہتی ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں