The news is by your side.

Advertisement

فاٹا سے کامیاب ایک اور آزاد امیدوار کی تحریک انصاف میں شمولیت

اسلام آباد: فاٹا کے علاقے اورکزئی سے کامیاب ہونے والے آزاد امیدوار غزن خان اور سابق رکن قومی اسمبلی غازی غزن جمال نے تحریک انصاف میں شمولیت کا اعلان کردیا۔

تفصیلات کے مطابق فاٹا انتخابات میں اورکزئی سے منتخب ہونے والے رکن صوبائی اسمبلی اور جی جی جمال نے اسلام آباد میں وزیراعظم عمران خان سے ملاقات کر کے تحریک انصاف میں شمولیت کا اعلان کیا۔

دونوں اراکین نے عمران خان اور تحریک انصاف کی حکومت پر اعتماد کا اظہار کرتے ہوئے غیر مشروط حمایت کی یقین دہانی کرائی۔

وزیراعظم سے اراکین کی ملاقات کے دوران وزیر اعلیٰ خیبرپختونخواہ محمود خان اور سینئر رہنما جہانگیر ترین بھی موجود تھے۔ دونوں اراکین کو شمولیت کے بعد پارٹی مفلر پہنایا گیا۔

جہانگیر ترین نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر ٹویٹ کرتے ہوئے کہا کہ ’’اورکزئی سے منتخب ہونے والے رکن صوبائی اسمبلی غازی غزن جمال کو خوش آمدید کہتا ہوں، تحریک انصاف ہمشہ نوجوانوں کی حوصلہ افزائی کرتی ہے‘‘۔

یاد رہے کہ خیبر پختونخوا میں ضم ہونے والے7 قبائلی اضلاع کی16 صوبائی نشستوں پر 20 جولائی کو ملکی تاریخ میں پہلی بار انتخابات کا انعقاد کیا گیا تھا۔الیکشن کمیشن کے نتائج کے مطابق آزاد امیدواروں نے چھ، تحریک انصاف نے پانچ اور جمعیت علمائے اسلام (ف) نے تین نشستوں پر کامیابی حاصل کی۔

مزید پڑھیں: فاٹا کے آزاد امیدوار آفریدی کی تحریک انصاف میں شمولیت

گزشتہ روز قبائلی علاقے کے حلقہ پی کے 107 ضلع خیبر سے کامیاب ہونے والے محمّد شفیق آفریدی نے وزیراعلیٰ خیبرپختونخواہ اور پی ٹی آئی کے مرکزی رہنما جہانگیر ترین سے ملاقات کی تھی۔ محمد شفیق آفریدی نے عمران خان اور حکومت کی پالیسیوں کو سراہتے ہوئے پاکستان تحریک انصاف میں شمولیت کا اعلان کیا تھا۔

قبائلی علاقے کے حلقہ پی کے 115 میں مبینہ دھاندلی پر تحریک انصاف کے امیدوار نے جمعیت علماء اسلام ف کے امیدوار کی کامیابی کو چیلنج کیا ہے، تحریک انصاف کے امیدوار برائے پی کے 115 عابد الرحمان کی جانب سے اسلام آباد ہائی کورٹ میں درخواست دائر کی گئی جس میں مؤقف اختیار کیا گیا کہ انتخابی نتائج کے روز وہ تین ہزار ووٹوں سے سبقت لے رہے تھے کہ ریٹرنگ آفیسر نے نتائج روک دیے اور پھر انہیں دوسرے دن جاری کیا لہذا دوبارہ گنتی کی جائے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں