site
stats
سندھ

قائد ایم کیو ایم نے کل پارٹی میں دوبارہ شمولیت کی اپیل کی، ارم عظیم فاروقی

کراچی: ایم کیو ایم کی منحرف سابق خاتون رُکن اسمبلی ارم عظیم فاروقی نے کہا ہے کہ کل قائد ایم کیو ایم نے ٹیلی فون کرکے مجھ سے رابطہ کیا جس پر  میں نے پاکستان زندہ باد کا نعرہ لگایا۔

More resignations imminent in MQM Pakistan… by arynews

اے آر وائی نیوز سوال یہ ہے میں میزبان ماریہ میمن کی جانب سے آج کی پریس کانفرنس کے حوالے سے پوچھے گئے سوال کے جواب میں ’’ایم کیو ایم کی مستعفیٰ خاتون رکن صوبائی اسمبلی نے انکشاف کیا کہ ’’قائد ایم کیو ایم نے گزشتہ روز ٹیلی فون پر اُن سے رابطہ کیا اور پارٹی چھوڑنے کے حوالے سے دریافت کیا۔

ارم عظیم فاروقی کا کہنا ہے کہ ’’میں نے قائد ایم کیو ایم سے پاکستان مخالف نعرے کے حوالے سے دریافت کیا تو انہوں نے جواب دیا کہ میں اب سن آف سوائل نہیں رہا، اسٹیبلشمنٹ نے میرے کارکنان پر بہت ظلم کیے ہیں، یہ نعرے اُس کا ردعمل تھے‘‘۔

سابق رکن اسمبلی کا کہنا ہے کہ ’’دورانِ گفتگو قائد ایم کیو ایم نے میری کوئی بات نہیں سُنی اور اپنا دفاع کرتے رہے اور مجھے اپنی باتیں سمجھانے کی ناکام کوشش کرتے رہے۔

ارم عظیم فاروقی کا کہنا ہے کہ ’’میں نے قائد ایم کیو ایم کو صاف جواب دے دیا کہ ان نعروں کے بعد اب میں آپ کی پارٹی میں نہیں آؤں گی۔

پڑھیں:  پاکستان مخالف نعرے، متحدہ رکن سندھ اسمبلی ارم عظیم فاروقی مستعفی

مستعفی رکن کا کہنا ہے کہ ’’میں نے قائد ایم کیو ایم کی بات کے جواب میں ’’پاکستان زندہ باد‘‘ کا نعرہ لگایا اور انہیں کہا کہ میرا ملک ہمیشہ زندہ باد رہے گا‘‘۔

ارم عظیم فاروقی کا کہنا تھا کہ ’’فاروق ستار کہہ رہے ہیں تو انہیں ایک موقع دینا چاہیے کیونکہ ایم کیو ایم کے بیشتر رہنماء ڈاکٹر فاروق ستار سے متفق ہیں، کئی رہنماؤں نے مجھ سے رابطہ کر کے استعفیٰ دینے پر مبارک باد بھی دی اور کہا کہ ’’اگر اب ایم کیو ایم پاکستان کے معاملات میں لندن نے مداخلت کی تو ہم بھی مستعفیٰ ہوجائیں گے‘‘۔

مزید پڑھیں: ایم کیو ایم کے کارکن دھمکیاں دے رہے ہیں، ارم عظیم فاروقی

ار فاروقی کا کہنا تھا کہ ’’جن لوگوں نے قائد ایم کیو ایم سے گفتگو کرتے ہوئے مجھے دھمکیاں دیں اُن کے خلاف امریکا کے تھانے میں مقدمہ درج کردیا ہے کیونکہ میں اُن تمام آوازوں کو جانتی ہوں‘‘۔

خبر پڑھیں:  دھمکیوں سے نہیں ڈرتی، سید اور شیرنی ہوں، ارم عظیم فاروقی

یاد رہے 22 اگست کو پریس کلب کے باہر ملک مخالف تقریر اور اے آر وائی نیوز پر حملے کے بعد ارم عظیم فاروقی نے پارٹی رکنیت اور صوبائی اسمبلی سے استعفیٰ دینے کا اعلان کرتے ہوئے ’’پاکستان زندہ باد‘‘ کا نعرہ لگایا تھا۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top