The news is by your side.

Advertisement

بلدیاتی ترمیمی ایکٹ: ایم کیو ایم نے ڈرافٹ میں کیا کیا شامل کرایا؟

کراچی: بلدیاتی ترمیمی ایکٹ کے معاہدے پر ایم کیو ایم اور پیپلز پارٹی کے درمیان اہم پیش رفت ہوئی ہے۔

ذرائع کے مطابق ایم کیو ایم نے بلدیاتی ترمیمی ایکٹ کا ڈرافٹ پی پی کےحوالے کردیا ہے، ڈرافٹ ایک سو پچاس صفحات پر مشتمل اور سپریم کورٹ کے فیصلے کے مطابق تیار کیا گیا ہے جس میں بلدیاتی ادارے ، اتھارٹیز مئیر کے ماتحت کرنے کی شق کو خاص طور پر شامل کیا گیا ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ ڈرافٹ میں انتظامی، مالی اختیارات بھی میئر کے ماتحت کرنےکی شق شامل کی گئی ہے جبکہ بلدیاتی نظام کو میٹروپولیٹین کارپوریشن کی شکل میں چلانےکی بھی تجویز دی گئی ہے۔

ذرائع کے مطابق ایم کیو ایم پیپلز پارٹی کو ڈرافٹ پر قانون سازی کرکے اسے قانونی شکل دینی ہے۔

یہ بھی پڑھیں: پنجاب میں بیورو کریسی میں بڑے پیمانے پر اکھاڑ پچھاڑ کا فیصلہ

ادھر ایڈمنسٹریٹر کے حوالے سے ایم کیو ایم رابطہ کمیٹی نے ناموں پر مشاورت شروع کردی ہے، ایم کیو ایم کا فیصلہ ہے کہ مکمل اختیارات مل جانے کے بعد میئریا ایڈمنسٹریٹر شپ لینے پر غور کیا جائے گا۔

یاد رہے کہ چوبیس مارچ کو پیپلزپارٹی نے ایم کیوایم کےمطالبات مان لیے تھے جبکہ دونوں جماعتوں نے ترمیمی بلدیاتی قانون کی شقوں پر اتفاق بھی کیا تھا۔

 

Comments

یہ بھی پڑھیں