site
stats
پاکستان

اے آر وائی حملہ، متحدہ کی 3 خواتین ضمانت پر رہا

کراچی: اے آر وائی نیوز پر حملہ کرنے والی تین خواتین کا ضمانت پر رہا ہونے کے بعد متحدہ کی جانب سے ان کا والہانہ استقبال کیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق ایم کیوایم کی گرفتار تین خواتین ضمانت پر رہا کردی گئیں، خواتین جیل سے رہا ہونے پر ایم کیو ایم کے عارضی دفتر گھانچی ہال پی آئی بی پہنچیں تو ان کا پرتپاک استقبال ہوا اور پھولوں کی پتیاں نچھاورکی گئیں۔

استقبال کرنے والوں میں ایم کیو ایم پاکستان کے اہم رہنما عامر خان ، خواجہ اظہار الحسن سمیت کارکنوں کی بڑی تعداد موجود تھی جنہوں نے نعرے لگا کر استقبال کیا۔

تینوں خواتین کو 22 اگست کو اے آر وائی نیوز پرحملے کے الزام میں گرفتار کیا گیا تھا، ایم کیو ایم کے بانی کی تقریرکے بعد کارکنوں نے حملہ کیا تھا۔

ایم کیو ایم کی گرفتار خواتین کی گذشتہ روز ضمانت ہوگئی تھی لیکن سیونگ سرٹیفکیٹ کی تصدیق نہ ہونے کی وجہ سے انہیں رہائی آج ملی۔

 

اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے ایم کیو ایم کے رہنما خواجہ اظہار الحسن کا کہنا تھا کہ خواتین کارکنان کی گرفتاری تکلیف دہ لمحات تھے، گرفتار خواتین کارکنان کو دیکھ کر دکھ ہوا، ایم کیو ایم 22 اگست کے نقصان کا ازالہ کررہی ہے۔

ایم کیو ایم رہنما کا کہنا تھا کہ ایم کیو ایم کو جتنا دیوار سے لگایا جائے گا وہ اتنی قوت سے ابھرے گی، بینرز لگانے والوں کی نشاندہی کی ذمے داری قانون نافذ کرنے والے اداروں کی ہے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top