The news is by your side.

Advertisement

ملا ہیبت اللہ اخوندزادہ افغان طالبان کے نئے امیر مقرر

کابل: طالبان کی 17 رکنی مجلس شوری نے تین دن سے جاری مشاورتی اجلاس کے بعد ملا ہیبت اللہ کو افغان طالبان کا نیا امیر مقررکر دیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق طالبان کے ترجمان نے ملااختر منصور کی ہلاکت کی تصدیق کا باضابطہ اعلان کرتے ہوئے بتایا کہ نئے امیر کے چناؤ کے لیے افغان طالبان کی 17 رکنی مجلس شوری کا اجلاس تین دن سے جاری تھا،اجلاس میں متفقہ طور پر ہیبت اللہ اخوندزادہ کو نیا امیر منتخب کر لیا گیاہے۔


ملا اختر منصور کی ڈرون حملے میں ہلاکت 


ذرائع کے مطابق افغان طالبان کے نئے امیر کے لیے مضبوط امیدوار ملا عمر کے بیٹے ملا یعقوب اور
امریکہ کو نہایت مطلوب سراج حقانی تھے،تاہم ان دونوں حضرات نے امیر بننے سے معذرت کی،اور ملا ہیبت اللہ کے لیے اپنی حمایت کا یقین دلایا،جس کے بعد ملا ہیبت اللہ کو امیر مقرر کرنے کا اعلان کیا گیا ہے۔

جب کہ سابق امیر ملا عمر کے بیٹے ملا یعقوب اور سراج حقانی کو نو منتخب امیر کی معاونت کے لیے ’’افغان طالبان کے ڈپٹی سپریم لیڈر‘‘ کہ ذمہ داریاں دی گئیں ہیں۔

یاد رہے نو منتخب ملا ہیبت اللہ حال ہی میں ڈرون حملے کے نتیجے ممیں ہلاک ہونے والے امیر ملا اختر منصور کے نائب تھے اور طالبان کی عدالتی نظام کے سربراہ رہ چکے ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں