The news is by your side.

Advertisement

پاکستان کی معروف نعت خواں منيبہ شيخ کو ہم سے بچھڑے تین سال بیت گئے

کراچی : پاکستان کی معروف نعت خواں منيبہ شيخ کی آج تیسری برسی ہے۔ کلام اقبال کا ہو يا خواجہ غريب نواز کا، منيبہ شيخ کي پر تاثیر آواز نے اسے جاوداں بنا ديا۔

زمانہ طالب علمی سے سرور کائنات حضرت محمد مصطفیٰ کی خدمت ميں گلہائے عقيدت پيش کرنے والی آواز پہلے ريڈيو پھر ٹی وی اور اس کے بعد سوشل میڈیا کے ذریعے دنيا بھر ميں گونجی۔

انہوں نے ریڈیو پاکستان سے پہلی مرتبہ نعت مرحبا سیّدی مکّی مدنی العربی پڑھی، اس کے بعد انہوں نے ریڈیو کے پروگرام پلیٹ فارم کی پانچ سال تک کمپیئرنگ بھی کی۔

ان کے انداز اور طرز میں نعتیں آج بھی میلادوں میں نہایت اہتمام اور شوق سے پڑھی جاتی ہیں۔ حکومت پاکستان کی جانب سے منیبہ شیخ کو ان کی گراں قدر خدمات کے پیش نظر 14 اگست 1988ء کو صدارتی تمغہ برائے حسن کارکردگی سے نوازا گیا تھا۔

منیبہ شیخ14مئی سال2017کو خالق حقیقی سے جاملیں وہ طویل عرصے سے گردے کے عارضہ میں مبتلا تھیں۔ پاکستان میں نعت خوانی کے شعبے کے فروغ اور اس میں نمونہ مثال بننے والی منیبہ شیخ نے زمانہ طالب علمی ہی سے نعت خوانی کا آغاز کیا۔

جلد ہی محبت و عقیدت میں ڈوبی یہ آواز اسکول اور جامعہ سے نکل کر ریڈیو اور ٹیلی ویژن کے ذریعے گھر گھر پہنچی اور عالمی سطح پر متعارف ہوئی، زمانہ طالب علمی سے پروان چڑھنے والا شوق نعت خوانی ان کی زندگی کی آخری سانس تک جاری رہا۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں