The news is by your side.

Advertisement

وفاقی حکومت کورونا سے نہیں سندھ حکومت سے لڑنا چاہتی ہے، مرتضیٰ وہاب

کراچی : ترجمان حکومت سندھ مرتضیٰ وہاب نے تنقید کرتے ہوئے کہا وفاقی حکومت کورونا سے نہیں سندھ حکومت سے لڑنا چاہتی ہے، وفاق نئے اسپتال بنانے کے بجائے ہمارے کامیاب ادارے بھی واپس لے رہا ہے،  وزیراعظم صاحب یہ وقت لینے کا نہیں دینے کا ہے۔

تفصیلات کے مطابق سندھ حکومت کے ترجمان مرتضیٰ وہاب نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کورونا سےمتعلق شہریوں سےگزارش ہےسماجی فاصلہ رکھیں، سندھ اسمبلی ٹیکنالوجی کےذریعےپہلاآن لائن اجلاس کرےگی،آج کی پیش رفت ایک اہم پیش رفت ہے، عوام کےمنتخب نمائندےاپنےگھروں پربیٹھ کر کام کر سکتے ہیں، اسی طرح عوام بھی تمام احتیاطی تدابیر کو فالو کرسکتے ہیں۔

مرتضیٰ وہاب کا کہنا تھا کہ کوروناسےمتعلق 3 آرڈیننس کی آج سندھ اسمبلی نےمنظوری دی، گورنرکی منظوری کےبعدتمام قوانین کااطلاق ہوگا، ہم نے میڈیا کے ذریعے شہریوں کوآگاہ کیاہے۔

سندھ حکومت کے ترجمان نے کہا کہ کراچی کے 3 اسپتال سپریم کورٹ کےفیصلےکےبعدوفاق کومنتقل ہوناتھے، اسپتالوں میں این آئی سی ایچ،این آئی سی وی ڈی،جناح اسپتال شامل ہیں، سپریم کورٹ نے17جنوری 2019 کے فیصلے میں کچھ مندرجات طےکئے، ابھی تک کوئی بھی لوازمات وفاقی حکومت نے پورےنہیں کئے۔

ان کا کہنا تھا کہ سیاسی اعتبارسے پی ٹی آئی کےبہت سے چیمپئن بڑی باتیں کرتےرہےہیں، 2011 میں یہ اسپتال سندھ حکومت کو منتقل ہوئے تو ان کا بجٹ1 ارب تھا اور منتقلی کے بعد ترقی کا سفر تینوں اسپتالوں میں شروع ہوا۔

مرتضیٰ وہاب نے کہا کہ کراچی کے 12 مقامات پرچیسٹ پین یونٹ بنائےگئےہیں، لاکھوں کی تعدادمیں لوگ اس سہولت سےمستفیدہورہےہیں، جناح اسپتال کا ایک زمانے میں بہت برا حال تھا آج جناح اسپتال میں بہتری آئی ہے۔

ترجمان کا کہنا تھا کہ پبلک پرائیویٹ پارٹنر شب کو سندھ حکومت نے ڈیل کیا، مذاق اڑانے والے صرف تنقیدکرپائیں گے، کراچی میں واقع اسپتال میں مہنگا علاج مفت ہوتاہے، 15 سے16 ارب سندھ حکومت ان اسپتالوں پرخرچ کرتی ہے۔

انھوں نے مزید کہا کہ تھرپارکرمیں اٹیک ہوتاتھاتوکراچی آنے میں گھنٹوں لگتے تھے، ہم نے وہاں این آئی سی ایچ کاسینٹرکھول دیاہے، وفاق نے فنانسز کے حوالے سے سندھ حکومت سےرجوع نہیں کیا ، سندھ حکومت کی اس فیصلےمیں کوئی درخواست نہیں تھی، اصولی فیصلہ وفاق نےکرلیاکہ یہ اسپتال ان کو منتقل کردیے جائیں گے۔

مرتضیٰ وہاب کا کہنا تھا کہ کل فردوس شمیم کہہ رہے تھے کہ حالات اورتشویشناک ہیں، میں مانتا ہوں یہ حکومت بار بار یو ٹرن لیتی ہے، 2019 میں خود فیصلہ کرتےہیں یہ اسپتالوں کے بجٹ نہیں چلاسکتے، وفاق کوروناوائرس سے نہیں سندھ حکومت سے لڑناچاہتی ہے۔

ترجمان سندھ حکومت نے کہا کہ نیت ٹھیک ہوتی تووفاق کہتامیں کراچی میں نیااسپتال بناکردیتاہوں، ہم سب کوروناوائرس پرفوکس کررہےہیں، وفاق کوشش کررہا ہے کہ انتظامی معاملات میں دخل کرے اور 3 اچھے چلنے والے اسپتالوں کو لے لیا جائے جبکہ ہمارےبد ترین مخالف بھی ہماری حکمت عملی کی تعریف کر رہے ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں