The news is by your side.

Advertisement

مقبوضہ کشمیرمیں ایک طرف اسلحہ بردارافواج اور دوسری طرف نہتےعوام ہیں، مشعال ملک

اسلام آباد: حریت رہنما یاسین ملک کی اہلیہ مشعال ملک کا کہنا ہے کہ کریک ڈاؤن کے باعث مقبوضہ کشمیرمیں کسی سے کوئی رابطہ نہیں ہو پا رہا۔

تفصیلات کے مطابق کشمیری رہنما یاسین ملک کی اہلیہ مشعال ملک نے اے آروائی نیوز کے پروگرام باخبرسویرا میں بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ ساری توجہ سلامتی کونسل کا اجلاس بلانے پر ہونی چاہیے۔

مشعال ملک نے کہا کہ مسئلہ کشمیرسے متعلق مقدمہ پہلے ہی سلامتی کونسل میں موجود ہے۔

انہوں نے کہا کہ مقبوضہ کشمیرمیں ایک طرف اسلحہ بردار افواج اوردوسری طرف نہتےعوام ہیں، نہتےعوام نے اسلحہ بردار افواج کا مقابلہ اب تک بڑی بہادری سے کیا ہے۔

مشعال ملک نے کہا کہ عالمی دنیا سے پوچھنا ہے کہ ان کا نوٹس لینے کے لیے کشمیریوں کوکتنا خون بہانا پڑے گا۔

انہوں نے کہا کہ کریک ڈاؤن کے باعث مقبوضہ کشمیرمیں کسی سے کوئی رابطہ نہیں ہوپا رہا، جو اطلاعات مل رہی ہیں ان کے مطابق لوگوں کو باہر نکلنے نہیں دیا جا رہا۔

مشعال ملک نے کہا کہ یاسین ملک کی طبیعت بہت خراب ہے انہیں ڈیتھ سیل میں رکھا گیا ہے، ان کی جان کوخطرہ ہے، ہمارا مطالبہ ہے انہیں فوری اسپتال منتقل کیا جائے۔

واضح رہے کہ بھارتی فوج نے مقبوضہ کشمیر میں کرفیو نافذ کر رکھا ہے، موبائل اور انٹرنیٹ سروس معطل ہے، شہریوں میں شدید خوف و ہراس پایا جاتا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں