site
stats
پاکستان

جموریت کا نام نہاد دعویدار بھارت دنیا کا سب سے بڑا دہشتگرد ہے، مشعال ملک

اسلام آباد : یوم شہدائے جموں و کشمیر کے موقع پر نیشنل پریس کلب اسلام آباد کے باہر پر احتجاجی مظاہرہ کیا گیا، جس میں مشعال ملک کا کہنا تھا کہ جموریت کا نام نہاد دعویدار بھارت دنیا کا سب سے بڑا دہشتگرد ہے۔

تفصیلات کے مطابق یوم شہدائے جموں و کشمیر کے موقع پر حریت رہنماء یاسین ملک کی اہلیہ مشعال ملک کی قیادت میں ہونے والے مظاہر ے میں اقلیتی رہنماء جے سالک سمیت سول سوسائٹی نے کثیر تعداد میں شرکت کی، سیاہ جھنڈے تھامے مظاہرین نے بھارت کے خلاف اور آزادی کے حق میں نعرے بازی کی۔


مزید پڑھیں : بھارت نے جنت نظیروادی مقبوضہ کشمیر کو کشمیریوں کیلئے جہنم بنا دیا ہے، مشال ملک


مظاہرین سے خطاب کے دوران مشعال ملک کا کہنا تھا کہ تحریک آزاد ی کشمیر درد کی داستان ہے، چھ نومبر انیس سو سینتالیس کو بھارتی فوج نے ڈوگرہ رائل آرمی اور آر ایس ایس کے ساتھ مل کر پانچ لاکھ سے زائد مسلمانوں کو موت کے گھاٹ اتارا اور پھر مقبوضہ کشمیر میں ہندؤں کی غیر قانونی آبادکاری کا آغاز کیا، جو تاحال جاری ہے۔

مشعال ملک کا کہنا تھا کہ گذشتہ چار ماہ سے مقبوضہ کشمیر میں بدترین مظالم کا سلسلہ جاری ہے، اسکول جلانے سمیت ہسپتالوں پر حملے کئے جا رہے ہیں جبکہ حریت قائدین کو قید رکھا گیا ہے۔

انکا مزید کہنا تھا کہ جموریت کا نام نہاد دعویدار بھارت دنیا کا سب سے بڑا دہشتگرد ہے جبکہ مظالم پر چپ سادھی عالمی برادری برابر کی مجرم ہے۔

حریت رہنماء یاسین ملک کی اہلیہ کا کہنا تھا کہ آزاد فضاؤں میں سانس لینے پر پاکستان قوم اللہ رب العزت کا شکار ادا کرے اور کشمیر ی قوم کا بھر پور ساتھ دے ۔


مزید  پڑھیں : مقبوضہ کشمیر میں بھارتی جارحیت، مشعال ملک نے روسی صدر سے مدد مانگ لی


یاد رہے کہ حریت رہنماء یاسین ملک کی اہلیہ مشعال ملک نے مقبوضہ کشمیر میں بھارتی جارحیت روکنے اور حریت قائدین کی فوری رہائی ممکن بنانے کیلئے روسی صدر سے مدد مانگی تھی۔

روسی صدر کو ارسال کئے گئے خط میں ولادی میر پیوٹن کو آگاہ کیا گیا تھا کہ بھارت مقبوضہ کشمیر میں ریاستی دہشتگردی کر رہا ہے، ایک سو تین روز سے جاری کرفیو کے دوران کشمیریوں پر مظالم کے پہاڑ توڑے جا رہے ہیں، کشمیریوں کو صحت جیسی بنیادی سہولیات فراہمی معطل کرنے سمیت انہیں ماورائے عدالت قتل کیا جا رہا ہے جبکہ بچوں اور عورتوں پر پیلٹ گنز کا استعمال کیا جا رہا ہے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

loading...

Most Popular

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top