The news is by your side.

Advertisement

سابق صدرپرویزمشرف ساتھیوں سمیت نواب اکبربگٹی قتل کیس سے بری

کوئٹہ: انسدادِ دہشت گردی کی عدالت نے سابق صدر پرویز مشرف سمیت تین افراد کو نواب اکبر بگٹی قتل کیس سے بری کردیاہے۔

تفصیلات کے مطابق آج بروز پیرکوئٹہ کی انسدادِ دہشت گردی کی عدالت نے نواب اکبر بگٹی قتل کیس کی سماعت کی۔

عدالت نے سماعت کے بعد اکبربگٹی قتل کیس میں نامزد سابق صدر پرویزمشرف، سابق وفاقی وزیرداخلہ آفتاب شیرپاؤ اور سابق صوبائی وزیرداخلہ شعیب نوشیروانی کو مقدمے سے بری کردیا ہے۔

بلوچستان سے تعلق رکھنے والے سیاستدان نواب اکبرخاں بگٹئی کے صاحب زادے جمیل بگٹی نے سابق صدر کے خلاف تین درخواستیں دائر کی تھیں جنہیں خارج کردیا گیا ہے۔

نواب اکبر بگٹی قتل کیس انسدادِ دہشت گردی کی عدالت میں ساڑھے تین سال سے فیصلے کا منتظرتھا۔

اس حوالے سے آل پاکستان مسلم لیگ کی سینئر رہنما آسیہ اسحاق نے اے آروائی نیوز سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ’’سابق صدر پرویز مشرف کے خلاف قائم کیے گئے تمام مقدمات سیاسی ہیں اور ان کی کوئی حقیقت نہیں ہے‘‘۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ ’’سابق صدرملک کے عدالتی نظام پریقین رکھتے ہیں اور عدالتیں اپنا کام درست سمت میں کررہی ہیں‘‘۔

سابق صدرپرویزمشرف تا حال بینظیربھٹو قتل کیس اورتین نومبرایمرجنسی کیس میں نامزد ملزم ہیں۔

نواب اکبرخاں بلوچستان کے علاقے ڈیرہ بگٹی کے سردارتھے اور اگست 2006 میں بلوچستان میں آرمی کی جانب سے دہشت گردوں کے خلاف کی جانے والی کاروائی میں جاں بحق ہوئے تھے۔

نواب اکبرخاں بگٹی گورنربلوچستان اوروفاقی وزیرداخلہ کے عہدے پربھی فائز رہے ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں