The news is by your side.

Advertisement

بھارت میں‌ بیل کی کھال لے جانے پر دومسلمان افراد پر حملہ

لکنو: بھارتی ریاست اتر پردیش میں بیل کی کھال لے جانے پر دو مسلمانوں کو درخت سے باندھ کر تشدد کا نشانہ بنادیا گیا۔

متاثر ہونے والے دو مسلمان اصفر اور پیرو اترپردیش کے ضلع باریچ میں رام گاوں کے ایک بار میں روکے تھے کہ  ان کی بوری گائے کی کھال گرگئی۔اسی دوران وہاں موجود مقامی افراد جس میں شیو سینا کے حامی افراد بھی موجود تھے ۔

مقامی افراد نے پہلے دونوں مسلمانوں سے کھال کے بارے میں پوچھا بعدازاں ان پر حملہ کردیا گیا۔دونوں مسلمانوں کو ایک درخت سے باندھ کر تشدد کا نشانہ بنایا گیا جس کے بعد انہیں پولیس کے حوالے کردیا گیا۔

پولیس نے نوجوانوں کے گائے ذبح کرنے کے قانون کے تحت ان پر مقدمہ درج کردیا جس کے بعد مقامی عدالت نے دونوں متاثرین کو عدالتی تحویل میں بھیج دیا گیا۔

متاثر افراد کا کہنا تھا کہ انہوں نے بیل کی کھال ڈھول اور ڈرم بنانے کے لئے لی ہے لیکن انہوں یہ نہیں بتایا کہ کھال کہاں سے لی ہے۔

جانورں کے ڈاکٹر نے تصدیق کی ہے کہ برآمد ہونے والی کھال بیل کی ہے ۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں