The news is by your side.

Advertisement

برطانیہ میں افطاری کے لیے نکلنے والی لڑکی کو گولی مار دی گئی

مانچسٹر: برطانیہ میں لنکا شائر کے صنعتی علاقے بلیک برن میں کار سوار ملزم کی فائرنگ سے 19 سالہ لڑکی جاں بحق ہو گئی۔

برطانوی میڈیا کے مطابق بلیک برن میں مسلم کمیونٹی سے تعلق رکھنے والی ایک لڑکی کو نامعلوم کار سوار شخص نے فائرنگ کر کے قتل کر دیا۔

بتایا جاتا ہے کہ جاں بحق لڑکی کا تعلق مسلم کمیونٹی سے ہے، اور وہ گھر سے افطاری کا سامان لینے کے لیے نکلی تھی، پولیس نے قتل کے اس واقعے کی تحقیقات شروع کر دی ہے۔

یہ واقعہ گزشتہ روز کنگ اسٹریٹ پر 3 بجے سہ پہر پیش آیا، علاقے میں گولی چلنے کی آواز سنی گئی اور اس کے بعد ایک نوجوان لڑکی کو سڑک پر بے حس حرکت پایا گیا، جسے فوری طور پر اسپتال پہنچایا گیا تاہم اسے مردہ قرار دے دیا گیا۔

پولیس کا کہنا ہے کہ لڑکی کی عمر 19 سال تھی، اس کی فیملی کو بھی مطلع کر دیا گیا، پولیس نے عوام سے اپیل بھی کر دی ہے کہ اگر کسی نے اس واقعے کو رونما ہوتے دیکھا ہو تو رابطہ کرے۔

لندن؛ حملے میں زخمی موذن نماز جمعہ کیلیے مسجد پہنچ گئے

انویسٹی گیشن ٹیم کے افسر جوناتھن ہومز کا کہنا تھا کہ یہ افسوس ناک اور بے رحم قتل ہے جس نے ایک لڑکی سے اس کی زندگی چھین لی، ہم دکھ کی اس گھڑی میں لڑکی کے لواحقین کے ساتھ ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ اس واقعے کے ذمہ دار کو پکڑا جائے گا، ہمارا خیال ہے کہ ہلکے رنگ کی ایک ٹویوٹا ایوینس گاڑی اس واقعے میں ملوث ہو سکتی ہے۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں