The news is by your side.

Advertisement

ننکانہ صاحب ہنگامہ،ن لیگیوں کا ایک دوسرے پر الزام

ننکانہ صاحب : ننکانہ صاحب میں جاری ہنگامہ آرائی کا ذمہ دار الزام مسلم لیگی رہنماؤں صدیق الفاروق اور رکنِ اسمبلی ذوالقرنین ڈوگر نے ایک دوسرے کو قرار دے دیا۔

تفصیلات کے مطابق ننکانہ صاحب میں تجاوزات کے خاتمے کے موقع پر مظاہرین نے محکمہ اوقاف کے دفتر سمیت کئی گاڑیوں کو آگ لگادی تھی جبکہ محکمہ اوقاف کے چئیر مین اور مسلم لیگی رہنما صدیق الفاروق کی گاڑی پر فائرنگ بھی کی گئی۔
لیگی رہنما صدیق الفاروق نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے ان واقعات کا ذمہ دار ن لیگی رکنِ اسمبلی ذوالقرنین ڈو گر کو قرار دیا، اُن کا کہنا تھا کہ ڈوگر کا تعلق قبظہ مافیا گروپ ہے،اور ان کی سر براہی میں مظاہرین جلاؤ گھیراؤ اور ہنگامہ آرائی کی،ڈوگر ہر جماعت میں شریک ہوجاتے ہیں جو اقتدار میں ہوتی ہے،پہلے موصوف ق لیگ میں تھے،اب ن لیگ میں شامل ہوئے۔

دوسری طرف ن لیگی رکن ِ اسمبلی ذوالقرنین ڈوگر نے اوقاف کے چئیرمین صدیق الفاروق کے الزامات کی تریدی کرتے ہوئے کہا کہ واقعہ کے اصل ذمہ دار صدیق الفاروق ہیں،وہ اپنے پرائیوٹ سیکیورٹی گارڈ کے ہمراہ لوگوں کے گھروں میں داخل ہوگئے جہاں دو خواتین کے ساتھ بد تمیزی بھی کی گئی، چادر و چادر دیواری کا تقدس پامال کرنے سے لوگوں میں اشتعال پھیلا جسے میں کنٹرول کرنے کی کوشش کر رہا ہوں۔مذید معلومات کے لیے پڑھیے


ننکانہ صاحب میں قبضہ مافیا کی ہنگامہ آرائی جاری


Comments

comments

یہ بھی پڑھیں