The news is by your side.

Advertisement

” یہ ایک ماہ بعد بجٹ واپس لینگے ورنہ حکومت چھوڑ دینگے”، ماہر معاشیات کا دعویٰ

سابق ترجمان وزارت خزانہ مزمل اسلم نے دعویٰ کیا ہے کہ امپورٹڈ حکومت ایک ماہ بعد اس بجٹ کو واپس لے گی یا حکومت چھوڑ دے گی۔

تفصیلات کے مطابق وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل کی پوسٹ بجٹ کانفرنس پر ردعمل دیتے ہوئے ماہر معاشیات مزمل اسلم نے کہا کہ یہ بجٹ اناڑیوں کا ہےانہوں نےاس میں دھوکا دینےکی کوشش کی ہے،ان کےبجٹ میں آمدن اور خرچوں کا کوئی توازن نہیں۔

مزمل اسلم نے کہا کہ بجٹ میں حکومت کےتخمینے ہی غلط ہیں، ایک بی کام کا طالب علم بھی غلطیاں نکال دےگا، موجودہ بجٹ سے زیادہ اور غلطیوں والا بجٹ پہلےکبھی نہیں آیا۔

یہ بھی پڑھیں: مزمل اسلم نے شہباز حکومت کا بڑا جھوٹ پکڑلیا

سابق ترجمان وزارت خزانہ نے کہا کہ حکومت نے شرح سود کی مد میں ایک ہزار ارب روپے کم دکھائے، مفتاح غلط بیانی کررہے ہیں کہ پیسے بچا کر صوبے ان کو800ارب دیں گے، اس طرح کے جھوٹے دعوے کئے گئے جس کے بعد آئی ایم ایف نام نہاد بجٹ کو مسترد کردے گا۔

اے آر وائی نیوز سے گفتگو میں مزمل اسلم نے دعویٰ کیا کہ میراخیال ہے کہ اگست ستمبر میں پور ابجٹ ہی دوبارہ آجائےگا، یا تو ایک مہینےبعد یہ بجٹ واپس لیں گے یاحکومت چھوڑ دیں گے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں