The news is by your side.

Advertisement

‘کیا مہنگائی کے تمام ریکارڈ ٹوٹنے جارہے ہیں؟’

اسلام آباد : ماہر معاشیات مزمل اسلم نے سوال کیا ہے کہ کیا مہنگائی کے تمام ریکارڈ ٹوٹنے جارہے ہیں؟

تفصیلات کے مطابق ماہر معاشیات مزمل اسلم نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے بیان میں کہا کہ ملک میں تاریخی مہنگائی پی پی کے 09-2008  اور1973 کےادوارمیں دیکھی گئی، 90کی دہائی میں بھی مہنگائی تھی، سوال یہ ہے کیا تمام ریکارڈ ٹوٹنے جارہےہیں؟

خیال رہے بجٹ کے بعد مہنگائی کی خوفناک لہر میں کھانے پینے کی اشیا کی قیمتوں میں اضافے نے لوگوں کےہوش اڑا دیئے۔

کراچی میں سبزی اورپھلوں کی قیمتوں میں بیس سے تیس روپے فی کلو اضافہ ہوگیا جبکہ دودھ ایک سو پچاس سےایک سوستر فی لیٹر فروخت کیا جا رہا ہے۔

آلو اور پیاز بھی دس روپے فی کلو مہنگی ہوکرساٹھ روپے فی کلو اور ٹماٹر بھی سوروپے فی کلو کر دیئے گئے جبکہ بکرے کا گوشت اٹھارہ سو روپے فی کلو، گائے کا گوشت بغیر ہڈی گیارہ سواور ہڈی والا نو سو روپے فی کلو میں فروخت کیا جارہا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں