The news is by your side.

Advertisement

چٹانوں کے درمیان پراسرار دھات کی پیدائش، ماہرین دنگ رہ گئے

امریکی ریاست یوٹاہ کے صحرا میں محکمہ وائلڈ لائف حکام کو عجیب و غریب قسم کا سامنا کرنا پڑا۔

بین الاقوامی میڈیا رپورٹ کے مطابق یوٹاہ کے محکمہ وائلڈ لائف ریسورسز کا عملہ پبلک سیفٹی ہیلی کاپٹر پر سوار تھا، جب ان کی نظر ایک چٹان پر پڑی، جس کے درمیان میں ایک دھاتی چیز چمک رہی تھی۔

حکام کا کہنا تھا کہ ہمارے پاس یہ بتانے کے لئے کچھ نہیں ہے کہ اس پر اسرار جگہ پر اس دھات کو کس نے اور کیوں نصب کیا، وہ آپس میں سرگوشی کرنےلگے کہ یہ انیس سو اڑسٹھ میں بننے والی فلم “اسپیس اوڈیسی دوہزار ایک” میں نظر آنے والی کالے رنگ کی دھات سے مشابہت رکھتی ہے۔

انہوں نے اندازہ کیا کہ یہ دس سے بارہ فٹ اونچی ہے جسے کسی نے اوپر سے نصب نہیں کیا تھا، یہ زمین پر مضبوطی کے ساتھ کھڑی تھی، یہ ٹیم دور دراز کے علاقے میں جنگلی بھیڑوں کی گنتی کرنے کی غرض سے گئے تھے جب انہوں نے اس پر اسرار شے کو دیکھا تھا۔

اس حیرت انگیز دریافت کے دوران ہیلی کا پٹر کا عملہ ایک دوسرے سے مذاق کرتے ہوئے کہتے ہیں کہ ہم سوچ رہے تھے ، کیا یہ ناسا وہاں پھنس گیا ہے یا کچھ اور؟ ایک اور کارکن کہتا ہے کہ اسی طرح مذاق کرتے ہوئے اگر ہم غائب ہوگئے تو باقی لوگ یہاں سے دوڑ لگادیں گے، اسی دوران ہیلی کاپٹر کے پائلٹ نے سنجیدہ لہجے میں کہا کہ یہ شاید کسی قسم کا آرٹ ہوسکتا ہے۔پائلٹ بریٹ ہچنگز کا مزید کہنا تھا کہ حیرت انگیز بات ہے کہ میں نے یہاں پورے سال پرواز کی ہے اس سے قبل مجھے ایسا کچھ نظر نہیں آیا۔

ہیلی کاپٹر کے عملے نے اس دھات کے صحیح مقام کے بارے میں مزید تفصیلات روک رکھی ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں