لاہور میں ٹکٹوں کی تقسیم ن لیگ کے لیے دردِ سر بن گئی، پارٹی ٹکٹوں کا اعلان -
The news is by your side.

Advertisement

لاہور میں ٹکٹوں کی تقسیم ن لیگ کے لیے دردِ سر بن گئی، پارٹی ٹکٹوں کا اعلان

زعیم قادری کی بغاوت نے دوسروں کے لیے بھی راستہ کھول دیا ہے، متنازع حلقوں کی ٹکٹوں کا اعلان مؤخر

لاہور: مسلم لیگ ن کے لیے لاہور میں ٹکٹوں کی تقسیم کا معاملہ دردِ سر بن گیا، ن لیگ نے قومی اور صوبائی حلقوں کے لیے پارٹی ٹکٹوں کا اعلان کردیا۔

تفصیلات کے مطابق ن لیگ کے ناراض رہنما زعیم قادری کی بغاوت نے دوسروں کے لیے بھی راستہ کھول دیا ہے، ایک رہنما راضی ہوتا ہے تو دوسرا ناراض ہوجاتا ہے۔

این اے 133 پر زعیم قادری کے بعد وحیدعالم کے بھی آؤٹ ہونے کا امکان پیدا ہوگیا ہے، دوسری طرف سردار ایاز صادق،علیم خان کا مقابلہ کرنے سے گریزاں ہیں۔

ذرائع کے مطابق بغاوت کے خدشے کے پیشِ نظر ن لیگ نے متنازع حلقوں کی ٹکٹوں کا اعلان مؤخر کر دیا ہے، شہباز شریف متنازع حلقوں کے امیدواروں سے خود رابطے کریں گے، جب کہ لاہور، نارووال، سیالکوٹ، فیصل آباد اور گجرات سے صرف 8 امیدواروں کا اعلان کیا گیا۔

دریں اثنا ن لیگ نے لاہور کے قومی اور صوبائی حلقوں کے لیے پارٹی ٹکٹوں کا اعلان کردیا ہے، این اے 132 اور لاہور 10 سے صدر مسلم لیگ ن شہباز شریف الیکشن لڑیں گے۔

قومی اسمبلی کے حلقے 127 اور صوبائی اسمبلی کے حلقے 173 سے مریم نواز کو ن لیگ کا ٹکٹ دیا گیا ہے، جب کہ این اے 124 اور پی پی 146 سے حمزہ شہباز مسلم لیگ ن کے امیدوار ہوں گے۔

لاہوریوں ثابت کردو لاہور کسی کا نہیں ہم سب کا ہے، بابر اعوان


پی پی 147 سے مجتبیٰ شجاع الرحمان کو مسلم لیگ ن کا ٹکٹ دیا گیا ہے، جب کہ این اے 78 سے احسن اقبال اور این اے 73 سے خواجہ آصف الیکشن لڑیں گے۔

ن لیگ نے این اے 106 سے رانا ثناءاللہ کو جب کہ این اے 108 سے عابد شیر علی اور این اے 131 اور لاہور 9 سے خواجہ سعد رفیق کو پارٹی ٹکٹ جاری کردیا ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں