The news is by your side.

Advertisement

بلامقابلہ سینیٹرز منتخب ہونے پر لیگی رہنما مطمئن، مریم کی پریشانی برقرار

لاہور : پنجاب سے سینیٹ کی نشستوں پر سیٹ ایڈجسٹمنٹ سے متعلق مریم نواز تو کچھ نہ بتاسکیں لیکن لیگی رہنما جاوید لطیف نے اہم بیان دے دیا۔

تفصیلات کے مطابق پنجاب سے سینیٹ کی نشستوں پر جس تناسب سے جس پارٹی کی موجودگی تھی اس حساب سے پارٹیوں کو سیٹ مل چکی ہیں، پاکستان تحریک انصاف اور مسلم لیگ نواز نے اپنے اپنے سینیٹرز بلا مقابلہ منتخب کرالیے ہیں اور چوہدری برادران نے اس میں کلیدی کردار ادا کیا ہے۔

مریم نواز شریف جیل کے باہر میڈیا نمائندوں کے سیٹ ایڈجسمنٹ سے متعلق سوال پر لاعملی کا مظاہرہ کرتے ہوئے کہا کہ میں اس پر بات نہ کروں تو بہتر ہوگا حالانکہ ماضی میں مریم نواز کہہ چکی تھی کہ حکومت سے بات چیت نہیں ہوگی۔

دوسری جانب اے آر وائی نیوز کے پروگرام ’سوال یہ ہے’ میں ن لیگ کے رہنما جاوید لطیف نے پنجاب میں سینیٹ الیکشن کا پورا فارمولا بتا دیا۔

جاوید لطیف نے کہا کہ اپنی تین جنرل سیٹوں پر کامیاب کے بعد 21 ووٹ ہمارے زائد تھے جبکہ دس ووٹ پیپلزپارٹی تھے اور دس کے قریب ووٹ مسلم لیگ (ق) کے تھے۔

جاوید لطیف نے کہا کہ پنجاب سے ق لیگ کے سینیٹر کامل علی آغا کی کامیابی سمجھ آجانا چاہیے کہ 3 تاریخ کے سینیٹ الیکشن میں کیا ہونے جارہا ہے،انہوں نے یوسف رضا گیلانی کی واضح اکثریت سے جیت کی نوید بھی سنادی۔

واضح رہے کہ سابق وزیراعظم پاکستان و رہنما پاکستان پیپلز پارٹی یوسف رضا گیلانی 2021 کے سینیٹ انتخابات میں اسلام آباد سے پاکستان ڈیموکریٹک مووٗمنٹ (پی ڈی ایم) کے مشترکہ امیدوار ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں