The news is by your side.

Advertisement

قومی اسمبلی سیکرٹریٹ کےعائشہ گلالئی کوقانونی امداداوررہنمائی فراہم کاانکشاف

اسلام آباد : تحریک انصاف کی باغی رہنما عائشہ گلالئی کو نا الی کیس میں قومی اسمبلی سیکرٹریٹ کاقانونی امداداوررہنمائی فراہم کرنے کا انکشاف ہوا ہے۔

تفصیلات کے مطابق قومی اسمبلی سیکرٹریٹ کے عائشہ گلالئی کو قانونی امداد اور رہنمائی فراہم کرنے کا انکشاف سامنے آیا، جس مین کہا گیا کہ ایاز صادق کے سیکریٹری نے اسمبلی سیکرٹریٹ کے شعبہ قانون سازی کو ہدایات دیں اور عائشہ گلا لئی کو قانونی معاونت فراہم کرنےکے لیےجوائنٹ سیکریٹری کی ذمے داری لگائی گئی۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ نا اہلی کیس کی سماعت پر عائشہ گلالئی کو معاونت اور قانونی امداد فراہم کی گئی جبکہ الیکشن کمیشن میں عائشہ گلالئی کے جمع کرائے گئے جواب کے لیے بھی رہنمائی اسمبلی سیکرٹریٹ نے کی۔

ذرائع کے مطابق تحریک انصاف کی جانب سے جمع کرایا گیا نا اہلی کاریفرنس بھی نظر اندازکیا گیا جبکہ پی ٹی آئی کےپانچ منحرف اراکین قومی اسمبلی سے بھی ا سپیکر آفس نے رعایت کی۔


مزید پڑھیں : عائشہ گلالئی کی نااہلی کے لیے عمران خان کی درخواست مسترد


پی ٹی آئی چیف وہپ کی درخواستوں کے باوجود کمیٹیوں سےنکالا نہ ہی کارروائی کی گئی۔

یاد رہے کہ الیکشن کمیشن آف پاکستان نے عائشہ گلالئی کو نا اہل کرنے سے متعلق چیئرمین پاکستان تحریک انصاف عمران خان کی درخواست مسترد کردی تھی۔

الیکشن کمیشن کے 5 میں سے3 ممبران نے درخواست خارج کرنے کے حق میں فیصلہ سنایا تھا۔


مزید پڑھیں : تحریک انصاف میں خواتین کی عزت محفوظ نہیں، عائشہ گلالئی


خیال رہے کہ رواں برس یکم اگست کو عائشہ گلالئی نے پریس کانفرنس کے دوران پاکستان تحریک انصاف چھوڑنے کا اعلان کرتے ہوئے عمران خان پرسنگین الزمات عائد کیے تھے۔

یاد رہے کہ رواں سال 28 اگست کو پاکستان تحریک انصاف نے عائشہ گلالئی کی پارٹی رکنیت منسوخ کردی تھی جبکہ انہیں ڈی سیٹ کرانے کے لیے الیکشن کمیشن سے رجوع کیا تھا۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں