نعت خواں خورشید احمد کو گزرے 9 برس بیت گئے -
The news is by your side.

Advertisement

نعت خواں خورشید احمد کو گزرے 9 برس بیت گئے

آج پاکستان کے نامور نعت خواں الحاج خورشید احمد کی نویں برسی ہے‘ ان کی معروف نعت ”یہ سب تمہارا کرم ہے آقا کہ بات اب تک بنی ہوئی ہے“ آج بھی دلوں میں حب نبوی ﷺ کی شمع فروزن رکھتی ہے۔

الحاج خورشید احمد رحیم یار خان کی بستی نور وال میں پیدا ہوئے تھے۔ 1973ءمیں انہوں نے کراچی یونیورسٹی سے گریجویشن کیا۔ اسی زمانے میں ان کی نعت خوانی کی شہرت ہوئی جس کے باعث انہیں ریڈیو پاکستان کے معروف پروڈیوسر مہدی ظہیر نے نعت خوانی کے لئے مدعو کیا۔

سن 1973ءسے 1977ءتک انہوں نے محفل نعت میں کراچی کی نمائندگی کا اعزاز حاصل کیا تاہم ان کی شہرت کا آغاز جناب خالد محمود نقش بندی کی مشہور نعت ”یہ سب تمہارا کرم ہے آقا کہ بات اب تک بنی ہوئی ہے“ سے ہوا جبکہ 1983ءمیں انہیں بہترین نعت خواں کا پی ٹی وی ایوارڈ عطا کیا گیا۔

وہ نہ صرف اردو میں نعتیں پڑھتے تھے بلکہ ساتھ ساتھ دیگر زبانوں میں بھی بشمول بنگالی زبان کے بھی نعت خوانی کرتے تھے۔

انہیں نگار ایوارڈ سے بھی نوازا گیا تھا اورامریکا میں نیوجرسی کے میئر نے بھی انہیں ایک خصوصی ایوارڈ عطا کیا تھا۔ حکومت پاکستان نے بھی انہیں صدارتی تمغہ برائے حسن کارکردگی عطا کیا تھا۔

۔30 اگست 2007ءکو پاکستان کے نامور نعت خواں الحاج خورشید احمد وفات پاگئے۔ وہ کراچی میں حضرت عبداللہ شاہ غازی کے مزار کے احاطے میں آسودہ خاک ہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں