آشیانہ ہاؤسنگ اسکیم اسکینڈل: ملزم شاہد شفیق جسمانی ریمانڈ پرنیب کےحوالے -
The news is by your side.

Advertisement

آشیانہ ہاؤسنگ اسکیم اسکینڈل: ملزم شاہد شفیق جسمانی ریمانڈ پرنیب کےحوالے

لاہور: احتساب عدالت نے آشیانہ اسکیم کرپشن میں گرفتار ملزم شاہد شفیق کو ایک روزہ جسمانی ریمانڈ پر نیب کے حوالے کردیا۔

تفصیلات کے مطابق آشیانہ ہاؤسنگ کرپشن میں گرفتاربسم اللہ کنسٹرکشن کے چیف ایگزیکٹو شاہد شفیق کو ضلع کچہری میں جوڈیشل مجسٹریٹ کے سامنے پیش کیا گیا۔

مجسٹریٹ نے ملزم شاہد شفیق کا ایک روزہ جسمانی ریمانڈ منظور کرتے ہوئے اسے نیب کے حوالے کردیا۔

ملزم شاہد شفیق بسم اللہ کمپنی کا چیف ایگزیکٹو ہے جس پرکمپنی کے لیے ٹھیکہ لینے کا الزام ہے۔

ذرائع کے مطابق ملزم شاہد شفیق کو کل احتساب عدالت میں پیش کیا جائے گا اور عدالت سے ملزم کے 15 روزہ جسمانی ریمانڈ کی درخواست کی جائے گی۔

آشیانہ ہاؤسنگ اسکیم اسکینڈل میں گرفتار ملزم شاہد شفیق کے وکیل نے میڈیا سے گفتگوکرتے ہوئے کہا کہ آشیانہ پراجیکٹ پر کمپنی بہت پیسہ لگا چکی ہے، کمپنی نے حکومت سے اب تک کوئی پیسہ نہیں لیا۔

علی بخاری نے کہا کہ میرے موکل شاہد شفیق کو پھنسایا جا رہا ہے، بہت جلد سب کے سامنے سچ اورجھوٹ آ جائے گا۔

یاد رہے کہ گزشتہ روز نیب نے ملزم شاہد شفیق کو حراست میں لیا تھا، ملزم پر ایل ڈی اے اہلکاروں کی ملی بھگت سے 14 ارب روپے کا ٹھیکہ جعلی کاغذات پرحاصل کرنے کا الزام ہے۔

واضح رہے کہ 22 فروری کو احتساب عدالت نے آشیانہ ہاؤسنگ سوسائٹی اسکینڈل میں گرفتار سابق ڈی جی ایل ڈی اے احد چیمہ 11 روزہ جسمانی ریمانڈ پرنیب کے حوالے کیا تھا۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں‘مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں