مریم نواز کی فرد جرم میں ترمیم ، کیلیبری فونٹ سے متعلق سیکشن تھری اے نکال دی گئی
The news is by your side.

Advertisement

مریم نواز کی فرد جرم میں ترمیم ، کیلیبری فونٹ سے متعلق سیکشن 3اے نکال دی گئی

اسلام آباد : سابق وزیر اعظم نواز شریف کی صاحبزادی مریم نوازاور کیپٹن ریٹائرصفدرکی فرد جرم میں ترمیم کی درخواست جزوی طورپرمنظورکرلی گئی اور کیلیبری فونٹ سے متعلق سیکشن تھری اے نکال دی۔

تفصیلات کے مطابق لندن فلیٹس کے ریفرنس میں مریم نواز اور ان کے شوہر کیپٹن ریٹائرڈ صفدر کی فرد جرم میں ترمیم کردی گئی، وکیل امجد پرویزنے احتساب عدالت میں موقف اختیار کیا کہ کیلبری فونٹ میں تیار دستاویزجعلی ثابت ہونے پر کارروائی کااختیار ہے، اس مرحلے پر اس الزام کو فرد جرم کا حصہ نہیں بنایا جاسکتا۔

نیب وکلاء نےدلائل میں کہا کیلبری فونٹ اکتیس جنوری دو ہزار سات سے قبل دستیاب ہی نہ تھا، یہ بات کلیئر ہونے پرالزام کو فرد جرم کا حصہ بنایا گیا، جعلی ٹرسٹ ڈیڈ سے متعلق فرانزک رپورٹ سپریم کورٹ میں پیش ہوئی،عدالت نے تحقیقات میں جمع مواد کا جائزہ لینا ہے۔

نیب پراسیکیوٹرزکا کہنا تھا کیپٹن صفدر صرف ٹرسٹ ڈیڈ پر دستخط کرنے والوں میں شامل ہیں،چارج ختم کر دیا جائے تو پھر ریفرنس کیسے چلایا جائے گا؟

دلائل کے بعد فرد جرم میں ترمیم کی درخواست جزوی طورپرمنظور کرتے ہوئے کیلبری فونٹ سے متعلق سیکشن تھری اےکوفرد جرم سے نکال دیا گیا۔

تاہم عدالت نے کہا کیلبری فونٹ کی جعلی دستاویز سےمتعلق پیراگراف متن کا حصہ رہے گا۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں